27 December 2018 - 12:49
‫نیوز‬ ‫کوڈ‬: 439455
فونت
ایران کی وزارت انٹیلی جنس نے کہا ہے کہ ایران کے لئے اسرائیلی وزیر کی جاسوسی کے انکشاف کے بعد صہیونی وزیراعظم نیتن یاہو اندرونی اور بیرونی دباؤ کا شکار ہے۔
رسا نیوز ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق اسلامی جمہوریہ ایران کی وزارت انٹیلی جنس نے کہا ہے کہ ایران کے لئے اسرائیلی وزیر کی جاسوسی کے انکشاف کے بعد صہیونی وزیراعظم نیتن یاہو اندرونی اور بیرونی دباؤ کا شکار ہے۔

محکمہ انٹیلی جنس نے اپنے ایک جاری کردہ بیان میں ایران کی جوہری سرگرمیوں سے متعلق صہیونیوں کے سیکورٹی حکام کی کارکردگی کے حوالے سے نیتن یاہو کے حالیہ بیانات پر اپنے ردعمل کا اظہار کیا۔

اس بیان میں ڈائریکٹر جنرل کاونٹر انٹیلی جنس کے حوالے سے کہا گیا ہے کہ بے بنیاد کہانیاں بنانا نیتن یاہو کا وطیرہ بن چکا ہے کیونکہ ایران کے لئے اسرائیلی وزیر کی جاسوسی بے نقاب ہونے کے بعد وہ صہیونیوں کے حساس اداروں پر ایرانی انٹیلی جنس کی گرفت سے شدید دباؤ کا شکار ہے۔

انہوں نے مزید کہا کہ نیتن یاہو نے حالیہ دنوں میں آرڈر دیا ہے کہ ایرانی انٹیلی جنس کے ساتھ مبینہ رابطے سے متعلق صہیونیوں کے سیاسی اور سیکورٹی حکام کی جانج پڑتال کی جائے، اور اس سے وہی حقیقت ظاہر ہوتی ہے جس پر ہم مزید بات کرنا ضروری نہیں سمجھتے۔/۹۸۹/ف۹۴۰/

تبصرہ بھیجیں
نام:
ایمیل:
* ‫نظریہ‬:
‫برای‬ مہربانی اپنے تبصرے میں اردو میں لکھیں.
‫‫قوانین‬ ‫ملک‬ ‫و‬ ‫مذھب‬ ‫کے‬ ‫خالف‬ ‫اور‬ ‫قوم‬ ‫و‬ ‫اشخاص‬ ‫کی‬ ‫توہین‬ ‫پر‬ ‫مشتمل‬ ‫تبصرے‬ ‫نشر‬ ‫نہیں‬ ‫ہوں‬ ‫گے‬