08 June 2019 - 12:47
‫نیوز‬ ‫کوڈ‬: 440550
فونت
محمد جواد ظریف :
ایران کے وزیر خارجہ نے اسلامی جمہوریہ ایران کے میزائل پروگرام پر امریکہ اور ان کے بعض اتحادیوں کے نئے دعووں کو مسترد کیا۔

رسا نیوز ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق اسلامی جمہوریہ ایران کے وزیر خارجہ محمد جواد ظریف نے اپنے ٹوئیٹ میں اس بات پر تاکید کرتے ہوئے کہ امریکہ نے اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل کی قرار داد نمبر 2231کی خلاف ورزی کرتے ہوئے جوہری معاہدے سے علیحدگی اختیار کی اور امریکہ اور اس کے اتحادی یمنی مظلوم عوام کے قتل عام کیلئے لاکھوں کی تعداد میں ہتھیار جارحین کو دے رہے ہیں کہا کہ وہ کسی بھی طور ایران کے میزائلی پروگرام کے حوالے سے اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل کی قرار داد نمبر 2231 کے شق کی تشریح کر کے دوسروں پر اسے مسلط نہیں کر سکتے۔

ایران کے وزیر خارجہ  نے اس جانب اشارہ کرتے ہوئے کہ اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل کی قرار داد نمبر 2231 ایران کو میزائلی پروگرام سے روکنے کیلئے نہیں ہے کہا کہ ایران کے میزائل جوہری ہتھیاروں کیلئے ڈیزائن نہیں ہوئے ہیں۔

واضح رہے کہ امریکہ اور فرانس کے صدر نے ہونے والی ملاقات میں ایرانی میزائل پروگرام پر تبادلہ خیال کیا اور ٹرمپ اور میکرون نے مشترکہ پریس کانفرنس میں کہا کہ واشنگٹن اور پیرس کے ایران کے مقابلے میں مشترکہ مقاصد ہیں اور جوہری معاہدے کے وسیع تر مفاد کیلئے نئے مذاکرات ہونے چاہئیں۔

تبصرہ بھیجیں
نام:
ایمیل:
* ‫نظریہ‬:
‫برای‬ مہربانی اپنے تبصرے میں اردو میں لکھیں.
‫‫قوانین‬ ‫ملک‬ ‫و‬ ‫مذھب‬ ‫کے‬ ‫خالف‬ ‫اور‬ ‫قوم‬ ‫و‬ ‫اشخاص‬ ‫کی‬ ‫توہین‬ ‫پر‬ ‫مشتمل‬ ‫تبصرے‬ ‫نشر‬ ‫نہیں‬ ‫ہوں‬ ‫گے‬
تازه ترین خبریں
مقبول خبریں