09 May 2012 - 16:16
‫نیوز‬ ‫کوڈ‬: 4078
فونت
مشارکت بالا اليکشن سوريہ ميں رونما ہونے والي تبديليوں کا پہلا قدم ؛
رسا نيوزايجنسي - مدرسين کونسل حوزہ علميہ کے رکن نے سوريہ کے اليکشن اور عوامي استقبال کي جانب اشارہ کرتے ہوئے تاکيد کي : انتخابات کا برگزار ہونا مخالفين ،عالمي سامراجيت اور استقامت مخالف گروپ کو عملي جواب ہے ?
آيت‌ الله کعبي

رسا نيوزايجنسي کے رپورٹر کي رپورٹ کے مطابق ، مدرسين کونسل حوزہ علميہ کے رکن آيت ‌الله عباس کعبي نے اج ظھر سے پہلے درس خارج فقہ الحکومت کے اغاز پر جو مدرسين کونسل کے کانفرنس حال ميں منعقد ہوا سوريہ کے اليکشن کي جانب اشارہ کرتے ہوئے کہا : سوريہ ميں اليکشن کا برگزار ہونا اصلاح کي جانب حکومت کے عزم وارادہ کا بيان گر ہے ?

انہوں نے امريکا کي ھمراہي ميں بعض عربي ممالک کي سوريہ کے بحران ميں شرکت کو محکوم کرتے ہوئے کہا : افسوس بعض پڑوسي ممالک من جملہ سعودي ، ٹرکي اور قطر داخلي جنگ کي اگ بھڑکانے ميں عالمي سامراجيت کے شانہ بہ شانہ رہے ?

آيت‌الله کعبي نے بيان کيا : سوريہ گورمنٹ ملکي نظام کے اصلاحات ميں مصمم ہے اور بالاترين مشارکت کے ساتھ اليکشن ميں شرکت بشار اسد کي عوامي حمايت کا بيان گر ہے ?

امام خميني (ره) تعليمي و تحقيقي مرکز کے علمي گروپ کے رکن نے تاکيد کي : سوريہ ان بحراني حالات سے جسے عالمي سامراجيت نے پيدا کيا تھا اساني کے ساتھ گزر گيا اور يہ ملک ھوشياري کے ساتھ داخلي جنگ کا خاتمہ بھي کردے گا کيوں کہ وہ اپسي اتحاد ويکجہتي کے پيرو ہيں ?

انہوں نے مزيد بيان کيا : سوريہ کا موجودہ بحران نرم جنگ ، اسلامي استقامت حزب اللہ لبنان اوراسلامي جمھوريہ ايران کے خلاف ہے جس کي فرنٹ لائن پرسوريہ گورمنٹ اور سوريہ کي عوام ہے ? ھميں توجہ کرني چاھئے کہ جو تحريک اس ملک ميں رواں دواں ہے وہ اسلامي بيداري کي لہروں سے بلکل مختلف ہے ?

آيت‌ الله کعبي نے مزيد کہا : سوريہ ميں اليکشن کا برگزار ہونا اصلاح کي جانب حکومت کے عزم وارادہ ، عالمي سامراجيت امريکا اور اسرائيل سے مخالفت اور استقامت لبنان سے ھمدردي کا بيان گر ہے ?

انہوں نے يہ بيان کرتے ہوئے کہ سوريہ حکومت نے صبر وبرد باري کے ساتھ امريکا ، اسرائيل اور ان کے غلاموں کي تھوپي ہوئي مکمل جنگ کا مقابلہ کيا اور پيروز ميدان رہے کہا : انہوں جس جنگ کا سوريہ ميں اغاز کيا تھا وہ حزب ‌الله لبنان سے غاصب صھيونيت کي 33 روزہ جنگ سے کہيں زيادہ ويران کن تھي ?
تبصرہ بھیجیں
نام:
ایمیل:
* ‫نظریہ‬:
‫برای‬ مہربانی اپنے تبصرے میں اردو میں لکھیں.
‫‫قوانین‬ ‫ملک‬ ‫و‬ ‫مذھب‬ ‫کے‬ ‫خالف‬ ‫اور‬ ‫قوم‬ ‫و‬ ‫اشخاص‬ ‫کی‬ ‫توہین‬ ‫پر‬ ‫مشتمل‬ ‫تبصرے‬ ‫نشر‬ ‫نہیں‬ ‫ہوں‬ ‫گے‬