30 July 2012 - 16:20
‫نیوز‬ ‫کوڈ‬: 4387
فونت
رسا نيوزايجنسي – پاکستان کے بزرگ شيعہ عالم دين آغا علي الموسوي کا اج فجر کے وقت انتقال ہوگيا ان کي نماز جنازہ 2 بجے دن لاہور ميں ہوگي ?
آغا علي الموسوي

رسا نيوزايجنسي کي رپورٹ کے مطابق ، پاکستان کے بزرگ شيعہ عالم دين آغا علي الموسوي کا طويل عرصہ علالت کے بعد اج فجر کے وقت انتقال ہوگيا، مرحوم کي نماز جنازہ باغ بيرون موچي گيٹ لاہور ميں 2 بجے دن ميں ادا کي جائے گي? اور پھر آج رات ان کا جسد خاکي لاہور سے اسلام آباد منتقل کيا جائے گا جہاں امام بارگاہ الصادق (ع) جي نائن ٹو اسلام آباد ميں رات نو بجے نماز ادا کي جائے گي? اوراس کے بعد مرحوم کا جسد خاکي بذريعہ ہوائي جہاز سکردو تدفين کيلئے منتقل کيا جائے گا?

پاکستان کے مختلف سياسي، مذہبي اور سماجي رہنماوں نے اپ کے انتقال کو قومي سانحہ قرار ديتے ہوئے کہا : اپ کي موت نے معاشرے ميں وہ خلاء پيدا کرديا جسے ھرگز پر نہيں کيا جاسکتا ?

نيز ا?غا علي الموسوي کي وفات پر شيعہ علما کونسل پاکستان کے سربراہ حجت الاسلام سيد ساجد علي نقوي، مجلس وحدت مسلمين پاکستان کے جنرل سکريٹري حجت الاسلام راجہ ناصر عباس، اماميہ اسٹوڈنٹس ا?رگنائزيشن کے مرکزي صدر اطہر عمران، جعفريہ اسٹوڈنٹس ا?رگنائزيشن کے مرکزي صدر ساجد علي ثمر، اور ديگر رہنماوں نے اپ کے انتقال پراظہار افسوس کيا ہے ?

انہوں نے مرحوم کے خانوادے اور ملت اسلاميہ کو تعزيت پيش کرتے ہوئے کہا : ملت اسلاميہ ايک جيد عالم دين اور متحرک رہنما سے محروم ہو گئي ہے? جن کا خلا صديوں پر بھي نہيں ہو سکے گا?

ائي ايس او لاہور ڈويژن کے صدر ناصر عباس نے تاکيد کي : اماميہ اسٹوڈنٹس ا?رگنائزيشن شفيق باپ سے محروم ہوگئي ہے?

مجلس وحدت مسلمين پاکستان کے دفتر سے جاري کردہ تعزيتي بيان ميں عالم باعمل عارف باللہ سيد علي الموسي کي وفات کو ملت جعفريہ کا بڑا نقصان قرار ديتے ہوئے سہ روزہ سوگ کا اعلان کيا گيا ہے?

قابل ذکرہے کہ مرحوم علامہ موسوي متعدد شيعہ تنظيموں خصوصاً اماميہ اسٹوڈنٹس آرگنائزيشن پاکستان کے باني اور سرپرست تھے? آئي ايس او کا نام بھي انہوں نے قرآني استخارہ سے رکھا? وہ اپني زندگي کي آخري سانسوں تک آئي ايس او کي مجلس نظارت کے مستقل رکن اور مالي حوالے سے بھي اس طلبہ تنظيم کي مدد کرتے رہے ?
تبصرہ بھیجیں
نام:
ایمیل:
* ‫نظریہ‬:
‫برای‬ مہربانی اپنے تبصرے میں اردو میں لکھیں.
‫‫قوانین‬ ‫ملک‬ ‫و‬ ‫مذھب‬ ‫کے‬ ‫خالف‬ ‫اور‬ ‫قوم‬ ‫و‬ ‫اشخاص‬ ‫کی‬ ‫توہین‬ ‫پر‬ ‫مشتمل‬ ‫تبصرے‬ ‫نشر‬ ‫نہیں‬ ‫ہوں‬ ‫گے‬