‫‫کیٹیگری‬ :
18 January 2017 - 16:18
‫نیوز‬ ‫کوڈ‬: 425768
فونت
ڈاکٹر علی اکبر صالحی:
اسلامی جمہوریہ ایران کے ایٹمی توانائی کے ادارے کے سربراہ نے کہا ہے کہ ایران ایٹمی معاہدے کی کبھی بھی پہلے خلاف ورزی نہیں کرے گا۔
ڈاکٹر علی اکبر صالحی


رسا نیوز ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق، ایران کے ایٹمی توانائی کے ادارے کے سربراہ ڈاکٹر علی اکبر صالحی نے منگل کے روز الجزیرہ ٹی وی کے ساتھ انٹرویو میں اس بات پر زور دیتے ہوئے کہ ایران ایٹمی معاہدے کی خلاف ورزی میں پہل نہیں کرے گا کہا کہ اگر امریکہ کے نومنتخب صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے ایٹمی معاہدے کو پھاڑ دیا تو ایران کسی چیز کو نہیں کھوئے گا۔

انھوں نے کہا کہ امریکہ کی جانب سے ایٹمی معاہدے کی خلاف ورزی کے بعد ایران بھی اپنے ایٹمی پروگرام کو اس طرح دوبارہ شروع کرے گا کہ امریکیوں کو اس سے جھٹکا لگے گا۔

ایران کے ایٹمی توانائی کے ادارے کے سربراہ نے اس بات پر زور دیتے ہوئے کہ ایران ایٹمی معاہدے کے بارے میں مذاکرات یا اس میں کسی بھی قسم کی تبدیلی کی آمادگی نہیں رکھتا ہے، مزید کہا کہ واشنگٹن کو ایٹمی معاہدہ جس طرح ہے اسی طرح قبول کرنا پڑے گا یا یہ کہ اسے پاؤں تلے روند دے اور اس کی خلاف ورزی کی ذمہ داری لے لے۔/۹۸۸/ ن۹۴۰

 

تبصرہ بھیجیں
نام:
ایمیل:
* ‫نظریہ‬:
‫برای‬ مہربانی اپنے تبصرے میں اردو میں لکھیں.
‫‫قوانین‬ ‫ملک‬ ‫و‬ ‫مذھب‬ ‫کے‬ ‫خالف‬ ‫اور‬ ‫قوم‬ ‫و‬ ‫اشخاص‬ ‫کی‬ ‫توہین‬ ‫پر‬ ‫مشتمل‬ ‫تبصرے‬ ‫نشر‬ ‫نہیں‬ ‫ہوں‬ ‫گے‬