13 December 2016 - 20:14
‫نیوز‬ ‫کوڈ‬: 425045
فونت
محمد جواد ظریف:
اسلامی جمہوریہ ایران کے وزیر خارجہ نے کہا : عراق میں قومی آشتی کا منصوبہ پیش کرنے میں نیشنل الائنس کا اقدام، ان کے ملک کے سیاسی مستقبل کے لئے غیر معمولی اہمیت کا حامل ہے۔
محمد جواد ظریف و سید عمار حکیم

رسا نیوز ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق اسلامی جمہوریہ ایران کے وزیر خارجہ محمد جواد ظریف نے تہران میں عراق کی نیشنل الائنس کے سرابراہ سید عمار حکیم سے ملاقات اور گفت و گو کی ۔

انہوں نے اس گفت و گو میں عراق میں حکومت، عوام، مختلف گروہوں اور اقوام  کی کامیابی کو قابل ذکر اہمیت کا حامل قرار دیتے ہوئے کہا : عراق میں قومی آشتی کا منصوبہ پیش کرنے میں نیشنل الائنس کا اقدام، ان کے ملک کے سیاسی مستقبل کے لئے غیر معمولی اہمیت کا حامل ہے۔

محمد جواد ظریف نے کہا : عراق میں مختلف گروہوں کے درمیان تعاون جاری ہے اور علاقے کے بعض ممالک کو چاہئے کہ اپنے مسائل و مشکلات عراق منتقل کرنے کی کوشش نہ کریں۔

انہوں نے عراق میں قومی آشتی کے منصوبے کی طرف اشارہ کرتے ہوئے وضاحت کی : اقوام متحدہ نے اس منصوبے کو منطقی اور قابل قبول قرار دیا ہے اور یہ ایک اہم کامیابی ہے۔

ایرانی وزیر خارجہ نے ایران اور عراق کے درمیان دیرینہ تعلقات کا حوالے دیتے ہوئے کہا : خطے میں دونوں ممالک کے درمیان دوطرفہ تعلقات کو اعلی سطح پر ہونا چاہئیے۔

انہوں نے تہران اور بغداد کے تعلقات کو بہت زیادہ خوشگوار قرار دیا اور تاکید کے ساتھ بیان کیا : ان تعلقات کو علاقے میں ایک نمونے میں تبدیل کئے جانے کی ضرورت ہے۔

اس ملاقات میں سید عمار حکیم نے بھی عراق کی صورت حال کے بارے می‍ں ایک رپورٹ پیش کرتے ہوئے اپنے ملک کے لئے ایران کی حکومت اور قوم کی جانب سے عراقی حكومت اور عوام كی جاری حمایت کی قدردانی کرتے ہوئے اس حمایت كا شكریہ ادا كیا ۔/۹۸۹/ف۹۳۰/ک۳۲۶/

تبصرہ بھیجیں
نام:
ایمیل:
* ‫نظریہ‬:
‫برای‬ مہربانی اپنے تبصرے میں اردو میں لکھیں.
‫‫قوانین‬ ‫ملک‬ ‫و‬ ‫مذھب‬ ‫کے‬ ‫خالف‬ ‫اور‬ ‫قوم‬ ‫و‬ ‫اشخاص‬ ‫کی‬ ‫توہین‬ ‫پر‬ ‫مشتمل‬ ‫تبصرے‬ ‫نشر‬ ‫نہیں‬ ‫ہوں‬ ‫گے‬