15 January 2017 - 16:51
‫نیوز‬ ‫کوڈ‬: 425695
فونت
​شمالی ایران کے صوبے گلستان میں شہدائے منی کے اہل خانہ نے ایک طومار پر دستخط کر کے منی کے المیے کا جائزہ لینے کے لئے ایک بین الاقوامی تحقیقاتی کمیٹی تشکیل دیئے جانے کا مطالبہ کیا ہے ۔
شہدای منی کے اہل خانہ

رسا نیوز ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق ایران کے صوبے گلستان کے شہر گنبد کاووس میں شہدائے منی کے اہل خانہ نے دو ہزار پندرہ میں عید قربان کے موقع پر رونما ہونے والے منی کے المیے کا گہرائی کے ساتھ جائزہ لینے کے لئے بین الاقوامی تحقیقاتی کمیٹی تشکیل دیئے جانے سے متعلق اقوام متحدہ کے نام طومار ارسال کرنے کا اعلان کیا ہے ۔

انہوں نے سلسلہ میں کہا ہے کہ منی کے انسانی المیے کے ذمہ دار افراد کی شناخت اور شہدائے منی کے اہل خانہ کے حقوق پورے کئے جانے کے سلسلے میں موثر اقدامات عمل میں لائے جانے کی ضرورت ہے۔

طومار پر دستخط کرنے کا عمل انٹرنیٹ کے ذری‏عے بھی انجام پائے گا تاکہ شہدائے منی کے اہل خانہ کے اس مطالبے کی حمایت میں پورے ایران کے عوام دستخط کر سکیں۔

اس سے قبل ایران کے شمال مشرقی صوبے خراسان رضوی سے تعلق رکھنے والے شہدائے منی کے اہل خانہ نے بھی اقوام متحدہ کے انسانی حقوق کمیشن کے نام ایک مراسلہ ارسال کر کے منی کے المیے کی تحقیقات کے لئے ایک کمیشن تشکیل دینے کا مطالبہ کیا تھا۔

دریں اثنا حج و زیارت کے امور میں نمایندۂ ولی فقیہ حجت الاسلام و المسلمین علی قاضی عسکر نے ایک بیان میں کہا ہے کہ آئندہ تئیس فروری کو سعودی عرب میں اس ملک کے متعلقہ حکام کے ساتھ ہونے والے مذاکرات میں عازمین حج کی سیکورٹی، قانونی امور، تاوان اور مسجدالحرام اور منی کے واقعات میں شہید ہونے والے زائرین اورعازمین حج کی دیت کے بارے میں گفتگو ہو گی۔/۹۸۹/ف۹۴۰/

تبصرہ بھیجیں
نام:
ایمیل:
* ‫نظریہ‬:
‫برای‬ مہربانی اپنے تبصرے میں اردو میں لکھیں.
‫‫قوانین‬ ‫ملک‬ ‫و‬ ‫مذھب‬ ‫کے‬ ‫خالف‬ ‫اور‬ ‫قوم‬ ‫و‬ ‫اشخاص‬ ‫کی‬ ‫توہین‬ ‫پر‬ ‫مشتمل‬ ‫تبصرے‬ ‫نشر‬ ‫نہیں‬ ‫ہوں‬ ‫گے‬