‫‫کیٹیگری‬ :
16 June 2017 - 18:52
‫نیوز‬ ‫کوڈ‬: 428573
فونت
ایران کے وزیر خارجہ محمد جواد ظریف نے کہا ہے کہ امریکیوں کو چاہئے کہ ایران میں نظام کی تبدیلی کے بجائے اپنے ملک کے نظام کو بچانے کی کوشش کریں۔
محمد جواد ظریف

رسا نیوز ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق، ایران کے وزیر خارجہ محمد جواد ظریف کا اپنے ٹویٹر پیغام میں مزید کہنا تھا کہ امریکی حکام غیرقانونی پالیسی اور نظام بدلنے کی مبہم سوچ اپنانے سے پہلے تاریخ کا مطالعہ کرکے اس سے سبق حاصل کریں۔

انہوں نے کہا کہ سن انّیس سو ترپن میں ایران میں فوجی بغاوت کی شرمناک شکست اور پھر سن انّیس سو اناسی میں اسلامی انقلاب کی مثالی کامیابی سے یہ بات واضح ہوجاتی ہے کہ ایرانی عوام اپنے مستقبل کے لئے بیرونی سازشوں کے مقابلے میں پوری طاقت و توانائی کے ساتھ مزاحمت و استقامت کا مظاہرہ کرتے ہیں۔

ایران کے وزیرخارجہ نے کہا کہ چند دہائیوں سے نظام کی تبدیلی اور پابندیوں کی حکمت عملی پر چلنے کے بعد امریکہ نے ایران میں انّیس سو ترپن کے واقعے پر معافی مانگی اور اس بات کو تسلیم کیا کہ مذاکرات ہی صرف مسئلے کا حل ہے۔

ایران کے وزیرخارجہ نے کہا کہ امریکہ کو چاہئے کہ وہ عوامی پشتپناہی کے مالک ایران کے اسلامی جمہوری نظام کو تبدیل کرنے کے بجائے اپنے نظام کو بچانے کی فکرکرے۔ /۹۸۸/ ن۹۴۰

 

تبصرہ بھیجیں
نام:
ایمیل:
* ‫نظریہ‬:
‫برای‬ مہربانی اپنے تبصرے میں اردو میں لکھیں.
‫‫قوانین‬ ‫ملک‬ ‫و‬ ‫مذھب‬ ‫کے‬ ‫خالف‬ ‫اور‬ ‫قوم‬ ‫و‬ ‫اشخاص‬ ‫کی‬ ‫توہین‬ ‫پر‬ ‫مشتمل‬ ‫تبصرے‬ ‫نشر‬ ‫نہیں‬ ‫ہوں‬ ‫گے‬