16 December 2016 - 21:56
‫نیوز‬ ‫کوڈ‬: 425106
فونت
پاکستان سپریم کورٹ نے انتہا پسندی اور دہشت گردی پر قابو پانے میں اسلام آباد حکومت کو ناکام قرار دیا ہے۔
پاکستان کی حکومت

رسا نیوز ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق پریس ٹی وی نے پاکستانی ذرائع کے حوالے سے رپورٹ دی ہے کہ پاکستان سپریم کورٹ کے تحقیقاتی کمیشن نے گزشتہ اگست میں ، کوئٹہ میں انجام پانے والے طالبان کے ایک بڑے حملے کے بارے میں رپورٹ جمعے کو جاری کردی ۔

پاکستان سپریم کورٹ کے کمیشن نے کوئٹہ میں سیکورٹی نقائص کا ذمہ دار وزارت داخلہ اورمحکمہ انسداد دہشت گردی کو قرار دیا ہے جس کے باعث طالبان حملہ کرنے میں کامیاب ہوئے تھے۔

پاکستان سپریم کورٹ کے کمیشن نے چھیالیس صفحات پر مشتمل اپنی رپورٹ میں جو پینتالیس سرکاری عہدیداروں کے بیانات کی بنیاد پر تیار کی گئی ہے ، اعلان کیا ہے کہ حکومت، انتہا پسندی اور دہشت گردی پر قابو پانے میں ناکام رہی ہے۔ یاد رہے کہ آٹھ اگست کو کوئٹہ کے ایک بڑے اسپتال میں بم کے دھماکے میں ستر افراد جاں بحق ہوگئے تھے ۔ بم کا یہ دھماکہ اسپتال کے ایمرجنسی وارڈ میں ہوا تھا ۔

اس دھماکے میں ستر افراد کے ہلاک ہونے کے ساتھ ہی تقریبا ایک سو بیس افراد زخمی ہوئے تھے۔ دھماکہ اس وقت ہوا تھا کہ جب کوئٹہ کے ایک نامور وکیل بلال انور کاسی کا جنازہ تحویل میں لینے کے لئے وکیلوں کی ایک بڑی تعداد اسپتال میں موجود تھی ۔ بلوچستان بار ایسوسی ایشن کے سابق صدر اور معروف وکیل بلال انور کاسی کو نامعلوم مسلح افراد نے گولی مارے کے قتل کردیا تھا۔/۹۸۹/ف۹۴۰/

تبصرہ بھیجیں
نام:
ایمیل:
* ‫نظریہ‬:
‫برای‬ مہربانی اپنے تبصرے میں اردو میں لکھیں.
‫‫قوانین‬ ‫ملک‬ ‫و‬ ‫مذھب‬ ‫کے‬ ‫خالف‬ ‫اور‬ ‫قوم‬ ‫و‬ ‫اشخاص‬ ‫کی‬ ‫توہین‬ ‫پر‬ ‫مشتمل‬ ‫تبصرے‬ ‫نشر‬ ‫نہیں‬ ‫ہوں‬ ‫گے‬