‫‫کیٹیگری‬ :
13 October 2017 - 18:09
‫نیوز‬ ‫کوڈ‬: 430367
فونت
حجت الاسلام مبارک موسوی :
سرزمین پاکستان کے نامور عالم دین حجت الاسلام مبارک موسوی نے سیالکوٹ میں شیعہ ڈاکٹر کی ٹارگٹ کلنگ پنجاب حکومت اور سی ٹی ڈی کے ماتھے پر کالنک کا ٹیکہ بتایا ۔
 مبارک موسوی

رسا نیوز ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق،  مجلس وحدت مسلمین پنجاب کے سیکرٹری جنرل حجت الاسلام مبارک موسوی نے لاہور میں اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ سیالکوٹ میں دن دیہاڑے ڈاکٹر محسن رضا کی ٹارگٹ کلنگ پنجاب حکومت اور کاونٹر ٹیررازم ڈیپارٹمنٹ کے ماتھے پر کلنک کا ٹیکہ ہے، سیالکوٹ انتظامیہ پوری شدت کیساتھ انتہاپسندوں سے مل کر ملت جعفریہ کو ہراساں کرنے میں مصروف ہے، سیالکوٹ میں انتہاپسندوں سے مل کر سیالکوٹ پولیس نے اسی محرم میں بے گناہ عزاداروں پر درجنوں ایف آئی آر کاٹی ہیں، پنجاب میں ملت جعفریہ کو دیوار سے لگانے کا عمل بند کیا جائے، ہمیں سٹرکوں پر نکلنے پر مجبور نہ کیا جائے کہ ہم وقت سے پہلے نام نہاد خادم اعلیٰ اور اس کے حواریوں کو گھر کا راستی دکھا دیں۔

انہوں نے کہا کہ لیگی حکومت اپنے کالے کرتوت چھپانے اور ملکی سلامتی کے اداروں کیخلاف ہرزہ سرائی میں مصروف ہے، عوام کو دہشتگردوں کے رحم و کرم پر چھوڑ دیا گیا ہے، ڈاکٹر محسن رضا شہید کے قاتل اور ان کے سہولت کار گرفتار نہ ہوئے تو ہم ہر قسم کا آئینی و قانونی احتجاج کرینگے۔

انہوں نے کہا کہ ایک طرف پنجاب میں ہمیں چن چن کر قتل کیا جا رہا ہے تو دوسری طرف ہمارے نوجوان اور علماء کو اغوا کیا جا رہا ہے، ہم اس مادر وطن کو بنانا ریپبلک نہیں بننے دینگے، پنجاب میں ہمارے شہداء کے لواحقین اب بھی انصاف کے منتظر ہیں۔

حجت الاسلام  موسوی نے کہا پنجاب پولیس داعشی ہم فکر انتہا پسند کالعدم تکفیری گروہ کے ہاتھوں یرغمال ہے، آپریشن ردالفساد عام عوام کیساتھ ساتھ پنجاب پولیس کے اندر بھی شروع کیا جائے، تاکہ انتہا پسندوں کے سہولت کار ان کالی بھیڑوں کو بے نقاب کیا جا سکے۔ /۹۸۹/ ف۹۴۰
 

تبصرہ بھیجیں
نام:
ایمیل:
* ‫نظریہ‬:
‫برای‬ مہربانی اپنے تبصرے میں اردو میں لکھیں.
‫‫قوانین‬ ‫ملک‬ ‫و‬ ‫مذھب‬ ‫کے‬ ‫خالف‬ ‫اور‬ ‫قوم‬ ‫و‬ ‫اشخاص‬ ‫کی‬ ‫توہین‬ ‫پر‬ ‫مشتمل‬ ‫تبصرے‬ ‫نشر‬ ‫نہیں‬ ‫ہوں‬ ‫گے‬