28 July 2016 - 06:11
‫نیوز‬ ‫کوڈ‬: 422556
فونت
حجت الاسلام احمد اقبال رضوی:
مجلس وحدت مسلمین کے رہنما نے بیان کیا : دہشت گرد عناصر کی فکری تربیت کے ادارے ملک دشمن سرگرمیوں میں مصروف ہیں۔
حجت الاسلام احمد اقبال رضوی


رسا نیوز ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق مجلس وحدت مسلمین پاکستان کے مرکزی ڈپٹی سیکرٹری جنرل حجت الاسلام احمد اقبال رضوی نے شہید عارف حسین الحسینی کی برسی کی مناسبت سے مرکزی اور صوبائی زمہ داران کا وحدت ہاوس میں منعقد اجلاس میں کہا : شیعہ سنی وحدت ہی ملکی استحکام اور سالمیت کی ضامن ہے ۔

انہوں نے وضاحت کرتے ہوئے کہا : یہ دونوں پاکستان کی وہ پُرامن طاقتیں ہیں جنہوں نے ہمیشہ پاکستان کی سربلندی اور تحفظ کے لیے اپنی جانوں کے نذرانے پیش کیے۔ جو قوتیں قیامِ پاکستان سے قبل ارض پاک کی مخالف تھیں آج انہی کے نظریات کو بنیاد بنا کرملک کو غیر مستحکم کرنے کی سازش کی جا رہی ہے۔

اس اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے حجت الاسلام احمد اقبال نے بیان کیا : دہشت گرد عناصر کی فکری تربیت کے ادارے ملک دشمن سرگرمیوں میں مصروف ہیں۔ شیعہ سنی اتحاد و یگانگت کے ہتھیار سے انہیں شکست دینا ہوگی۔

انہوں نے کہا : شہید قائد عارف حسین الحسینی ملک میں شیعہ سنی اخوت کے داعی تھے۔ انہوں نے ہمیشہ اس بات پر زور دیا ہے کہ ہمارے عقیدے اور نسلوں کی بقا ہمارے وطن عزیز کی سلامتی سے مشروط ہے اورہم نے اپنے آپ کو اس کے دفاع کے لیے وقف کرنا ہے۔

مجلس وحدت مسلمین کے رہنما نے بیان کیا : انہیں صیہونی و نصرانی طاقتوں نے اپنے گماشتوں کے ذریعے اپنے مفادات کی تکمیل کے لیے شہید کروا دیا۔ آج وہی یہود و نصاری پاکستان میں طالبانی و داعشی قوتوں کی سرپرستی کر رہے ہیں تا کہ ملک میں بد امنی پھیلا کر اپنے مذموم مقاصد کو پروان چڑھا سکیں۔ ہم نے شہید حسینی کی تعلیمات کو مشعل راہ بنا کر ان عناصر کوناکام بنانا ہے۔

انہوں نے کہا : شہید قائد کو ہم سے جدا ہوئے ۲۸ سال گزر گئے ہیں۔ اس سلسلے میں گزشتہ کئی برسوں سے وفاقی دارالحکومت میں قائد شہید کی برسی نہایت عقیدت و احترام سے منائی جاتی ہے۔

حجت الاسلام احمد اقبال نے بیان کیا : مجلس وحدت مسلمین کی طرف سے اس برسی کی تیاریاں حتمی مراحل میں داخل ہو چکی ہیں۔ سات اگست کو اس برسی کے جلسہ میں شرکت کرنے کے لیے ملک بھر سے شیعہ سنی علما کرام کی بڑی تعداد کے علاوہ ایک لاکھ سے زائد افراد کی آمد متوقع ہے ۔

انہوں نے کہا : تحفظ پاکستان کانفرنس، شہید قائدعارف حسینیؑ سے ملت پاکستان کے عشق کا مظہر ثابت ہوگی، پاکستان کے تمام چھوٹے بڑے شہروں سے قافلوں کی آمد کا سلسلہ برسی سے ایک دن قبل شروع ہو جائے گا۔

حجت الاسلام احمد اقبال نے تاکید کی : اسلام آباد انتظامیہ کو اس کی باقاعدہ اطلاع دی جا چکی ہے تاکہ وفاقی پولیس کی جانب سے سیکورٹی کے فول پروف انتظامات کو یقینی بنایا جائے۔
 

تبصرہ بھیجیں
نام:
ایمیل:
* ‫نظریہ‬:
‫برای‬ مہربانی اپنے تبصرے میں اردو میں لکھیں.
‫‫قوانین‬ ‫ملک‬ ‫و‬ ‫مذھب‬ ‫کے‬ ‫خالف‬ ‫اور‬ ‫قوم‬ ‫و‬ ‫اشخاص‬ ‫کی‬ ‫توہین‬ ‫پر‬ ‫مشتمل‬ ‫تبصرے‬ ‫نشر‬ ‫نہیں‬ ‫ہوں‬ ‫گے‬