18 September 2016 - 10:20
‫نیوز‬ ‫کوڈ‬: 423298
فونت
شہدائے سانحہ منٰی کی مظلومانہ اور جانگداز شہادت کی پہلی برسی کی مناسبت اور نیز شہید ڈاکٹر غلام محمد فخرالدین کی علمی، تحقیقی، تنظیمی، سیاسی اور اجتماعی خدمات کو خراج تحسین پیش کرنے کے لیے ایک عظیم الشان تعزیتی ریفرنس کا انعقاد ہوا ۔
حجت الاسلام غلام محمد فخرالدین

 

رسا نیوز ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق گزشتہ سال منٰی مقدس میں آل سعود کی مجرمانہ غفلت کے نتیجے میں جو اندوہناک سانحہ پیش آیا اسکے نتیجے میں سینکڑوں حجاج شہید ہوئے۔

اس افسوناک سانحے میں جہاں دنیا ئے اسلام کی عظیم شخصیات شہید ہوئیں وہیں پاکستان کے نامور عالم دین، محقق، مدافع ولایت، اتحاد امت کے داعی علامہ ڈاکٹر غلام محمد فخرالدین بھی شہید ہوئے۔

شہدائے سانحہ منٰی کی مظلومانہ اور جانگداز شہادت کی پہلی برسی کی مناسبت سے نیز شہید ڈاکٹر غلام محمد فخرالدین کی علمی، تحقیقی، تنظیمی، سیاسی اور اجتماعی خدمات کو خراج تحسین پیش کرنے کے لیے ایک عظیم الشان تعزیتی ریفرنس کا انعقاد شہید مرحوم کے آبائی گاوں قمراہ اسکردو میں انکے وارثین، خانوادہ اور عقیدت مندوں کے زیراہتمام کیا گیا۔

جس میں علماء، زعماء اور دانشوروں نے شہید کی ثمر بخش زندگی کے گوشوں کو اجاگر کیا گیا۔ اس موقع پر فرزند شہید کے علاوہ علمائے کرام نے شہید کی زندگی پر تفصیلی گفتگو کی۔

ان میں افضل روش، اطہر موسوی صدر آئی ایس او، رکن اسمبلی حاجی رضوان، ماسٹر تبسم، ڈاکٹر علی گوہر، مولوی غلام رضا ناظم آئی او، سربراہ ایم ڈبلیو ایم جی بی آغا علی رضوی اور شیخ نیئر عباس مصطفوی شامل تھے۔/۹۸۸/ ۹۴۰/

تبصرہ بھیجیں
نام:
ایمیل:
* ‫نظریہ‬:
‫برای‬ مہربانی اپنے تبصرے میں اردو میں لکھیں.
‫‫قوانین‬ ‫ملک‬ ‫و‬ ‫مذھب‬ ‫کے‬ ‫خالف‬ ‫اور‬ ‫قوم‬ ‫و‬ ‫اشخاص‬ ‫کی‬ ‫توہین‬ ‫پر‬ ‫مشتمل‬ ‫تبصرے‬ ‫نشر‬ ‫نہیں‬ ‫ہوں‬ ‫گے‬