06 November 2016 - 21:06
‫نیوز‬ ‫کوڈ‬: 424301
فونت
لبنان کی نیشنل فریڈم پارٹی کے ایک رکن نے کہا ہے کہ لبنان کے نئے صدر حزب اللہ کے ساتھ رابطے کی صورت میں کامیابیاں حاصل کر سکتے ہیں۔
حزب اللہ لبنان

رسا نیوز ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق لبنان کے نیشنل فریڈم دھڑے کے رکن فادی اعور نے تسنیم نیوز ایجنسی سے گفتگو کرتے ہوئے تاکید کے ساتھ کہا کہ لبنان کی حکومت اور حزب اللہ کے درمیان رابطہ ہمیشہ اسٹریٹیجک نوعیت کا رہا ہے اور لبنانیوں کو چاہئے کہ دشمن کے مقابلے میں حزب اللہ کے ساتھ رہیں۔

انہوں نے لبنان کے نئے صدر کے انتحاب کی طرف اشارہ کرتے ہوئے کہا کہ حزب اللہ اور بذات خود سید حسن نصراللہ کی حمایت کے نتیجے میں ہی میشل عون صدارت کے عہدے پر منتخب ہوئے ہیں اس لئے کہ مزاحمت کا موقف ہمیشہ مستحکم اور ناقابل تبدیل رہا ہے۔

قابل ذکر ہے کہ لبنان کے اراکین پارلیمنٹ نے اکتّیس اکتوبر کو چوتھے مرحلے میں لبنان کے تیرہویں صدر کی حیثیت سے میشل عون کا انتخاب کیا ہے۔ چوتھے مرحلے میں میشل عون کو حزب اللہ کی بھی حمایت حاصل تھی اور وہ مجموعی طور پر ایک سو ستّائیس اراکین میں سے تراسی اراکین کے ووٹوں سے لبنان کے نئے صدر کی حیثیت سے منتخب ہوئے۔/۹۸۹/ف۹۴۰/

تبصرہ بھیجیں
نام:
ایمیل:
* ‫نظریہ‬:
‫برای‬ مہربانی اپنے تبصرے میں اردو میں لکھیں.
‫‫قوانین‬ ‫ملک‬ ‫و‬ ‫مذھب‬ ‫کے‬ ‫خالف‬ ‫اور‬ ‫قوم‬ ‫و‬ ‫اشخاص‬ ‫کی‬ ‫توہین‬ ‫پر‬ ‫مشتمل‬ ‫تبصرے‬ ‫نشر‬ ‫نہیں‬ ‫ہوں‬ ‫گے‬