17 January 2017 - 21:30
‫نیوز‬ ‫کوڈ‬: 425752
فونت
حجت الاسلام مقصودعلی ڈومکی:
مجلس وحدت مسلمین پاکستان کے صوبائی سیکریٹری جنرل نے کہا : اسلام دشمن سامراجی قوتیں ، مسلمانوں کو آپس میں دست و گریبان دیکھنا چاہتی ہیں ۔
حجت الاسلام مقصود علی ڈومکی

رسا نیوز ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق مجلس وحدت مسلمین پاکستان کے صوبائی سیکریٹری جنرل حجت الاسلام مقصودعلی ڈومکی سابق وزیراعلیٰ سندہ، عوامی اتحاد پارٹی کے قائد لیاقت علی جتوئی کی دعوت پر بیٹوجتوئی پہنچے ۔بیٹوجتوئی میں ہونے والی ملاقات میں اے آئی پی کے مرکزی چئیرمین سینیٹر صداقت علی جتوئی ، ولایت علی خان جتوئی، مرکزی ترجمان غلام عباس مہیسر و دیگر رہنماء موجود تھے۔                 

 اس موقع پرگفتگو کرتے ہوئے حجت الاسلام مقصود علی ڈومکی نے کہا کہ سیاسی جماعتوں کو دھشت گردی اور کرپشن کے خلاف متحد ہوکر جدوجہد کرنی چاہئے، ہم سندہ سطح پر دھشت گردی اور کرپشن کے خلاف مشترکہ جدوجہد کے لئے ہم فکر جماعتوں سے رابطے کر رہے ہیں۔ جبکہ حیدر آباد میں منعقدہ آل پارٹیز کانفرنس اسی سلسلے کی کڑی تھی۔ اسلام دشمن سامراجی قوتیں ، مسلمانوں کو آپس میں دست و گریبان دیکھنا چاہتی ہیں، جبکہ تکفیری دھشت گرد ، سامراجی قوتوں کے آلہ کار بن کر بے گناہ مسلمانوں کا ناحق خون بہا رہے ہیں۔  داعشی دھشت گردوں کی تشکیل اور سرپرستی شیطان بزرگ امریکہ کے ہاتھوں ہوئی ہے۔                       

انہوں نے کہا کہ گذشتہ کئی دہائیوں سے وطن عزیز پاکستان دھشت گردی کی آگ میں جل رہا ہے ،  دھشت گردوں کے ہاتھوں اب تک اسی ہزار پاکستانی شہری شہید ہوچکے،  مجلس وحدت مسلمین نے دھشت گردی کے خلاف جدوجہد میں قائدانہ کردار ادا کیا ہے۔ ملک گیر دھرنوں سے لے کر وارثان شہدائے شکارپور کے ہمراہ تاریخی لانگ مارچ ملک دشمن دھشت گردوں کے خلاف پرامن جدوجہد کی اعلیٰ مثالیں ہیں۔ہم ملک کی تمام امن پسند قوتوں کو دعوت دیتے ہیں کہ آئیے دھشت گردی کے خاتمہ کے لئے ہمارا ساتھ دیجئے۔                    

اس موقع پر عوامی اتحاد پارٹی کے چیئرمین صداقت علی جتوئی نے کہا کہ مجلس وحدت مسلمین کی دھشت گردی کے خلاف جدوجہد کو قدر کی نگاہ سے دیکھتے ہیں۔ سندہ سطح پر اشتراک عمل پر بھی بات ہوسکتی ہے۔ حکمران جماعت کی کرپشن کے باعث سندہ کو کھنڈر بنا دیا گیا ہے۔ عوام پیپلز پارٹی سے خفا اور متبادل کی تلاش میں ہیں۔ متبادل وہی ہوسکتے ہیں جو کرپشن اور دھشت گردی کے سد باب کے لئے واضح ایجنڈا رکھتے ہوں۔/۹۸۹/ف۹۴۰/

تبصرہ بھیجیں
نام:
ایمیل:
* ‫نظریہ‬:
‫برای‬ مہربانی اپنے تبصرے میں اردو میں لکھیں.
‫‫قوانین‬ ‫ملک‬ ‫و‬ ‫مذھب‬ ‫کے‬ ‫خالف‬ ‫اور‬ ‫قوم‬ ‫و‬ ‫اشخاص‬ ‫کی‬ ‫توہین‬ ‫پر‬ ‫مشتمل‬ ‫تبصرے‬ ‫نشر‬ ‫نہیں‬ ‫ہوں‬ ‫گے‬