27 January 2017 - 19:48
‫نیوز‬ ‫کوڈ‬: 425943
فونت
امریکہ کی سابق وزیرِ خارجہ میڈلین البرائٹ نے ڈونلڈ ٹرمپ کی مسلمان مخالف پالیسیوں پر احتجاج کرتے ہوئے خود کو مسلمان رجسٹر کروانے کا اعلان کیا ہے۔
امریکا وزارت خارجہ

رسا نیوز ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق مہر خبررساں ایجنسی نے غیر ملکی ذرائع کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ امریکہ کی سابق وزیرِ خارجہ میڈلین البرائٹ نے ڈونلڈ ٹرمپ کی مسلمان مخالف پالیسیوں پر احتجاج کرتے ہوئے خود کو مسلمان رجسٹر کروانے کا اعلان کیا ہے۔

اطلاعات کے مطابق امریکہ کی سابق وزیرِ خارجہ میڈلین البرائٹ نے ٹویٹ کیا ہے کہ اگر امریکی مسلمانوں کےلئے علیحدہ رجسٹریشن کا قانون بنایا گیا تو وہ اپنا اندراج مسلمان کی حیثیت سے کروائیں گی۔

بل کلنٹن کے دورِ صدارت میں امریکی وزیرِ خارجہ کے عہدے پر فائز رہنے والی میڈلین البرائٹ اپنی سخت گیری کے باعث ’’لیڈی ہاک‘‘ کے نام سے بھی مشہور تھیں لیکن نئے امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کی متعصبانہ پالیسیوں اور متنازعہ بیانات کے بعد انہوں نے بھی امریکی مسلمانوں کے ساتھ کھڑے ہونے کا فیصلہ کیا ہے۔

سماجی رابطے کی ویب سائیٹ ٹوئٹر پر اظہار خیال کرتے ہوئے " میری پرورش بطور کیتھولک عیسائی ہوئی ، پھر میں امریکہ میں چرچ آف انگلینڈ کی پیروکار بنی اور بعد میں پتا چلا کہ میرا خاندان یہودی تھا۔ میں اظہارِ یکجہتی کےلئے بطور مسلمان رجسٹر ہونے کےلئے تیار ہوں۔"۔/۹۸۹/ف۹۴۰/

تبصرہ بھیجیں
نام:
ایمیل:
* ‫نظریہ‬:
‫برای‬ مہربانی اپنے تبصرے میں اردو میں لکھیں.
‫‫قوانین‬ ‫ملک‬ ‫و‬ ‫مذھب‬ ‫کے‬ ‫خالف‬ ‫اور‬ ‫قوم‬ ‫و‬ ‫اشخاص‬ ‫کی‬ ‫توہین‬ ‫پر‬ ‫مشتمل‬ ‫تبصرے‬ ‫نشر‬ ‫نہیں‬ ‫ہوں‬ ‫گے‬