11 April 2017 - 12:09
‫نیوز‬ ‫کوڈ‬: 427429
فونت
حجت الاسلام راجہ ناصر عباس جعفری :
مجلس وحدت مسلمین پاکستان کے مرکزی سیکرٹری جنرل نے کہا : آج کے دن حکمران اگر آئین کی پاسداری کا پوری قوم سے وعدہ کرلیں اور پھر اس پر ثابت قدم رہیں تو ملک میں حقیقی جمہوریت آ سکتی ہے ۔
راجہ ناصر عباس جعفری

رسا نیوز ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق مجلس وحدت مسلمین پاکستان کے مرکزی سیکرٹری جنرل حجت الاسلام راجہ ناصر عباس جعفری نے یوم دستور کے موقعہ پر مرکزی میڈیا سیل سے جاری اپنے بیان میں کہا ہے کہ آئین کا مکمل نفاذ ملک کو درپیش تمام مشکلات سے چھٹکارے کا واحد اور بہترین حل ہے۔

انہوں نے کہا کہ 1973 کا آئین ایک مقدس دستاویز ہے جس کی رو سے ملک میں بسنے والے ہر فرد کی مذہبی آزادی بنیادی حقوق میں شامل ہے۔یہ آئین بدعنوان عناصر کی حوصلہ شکنی کرتا ہے۔آئین پر عمل سماجی انصاف کے فروغ اور معاشرتی برائیوں کے خاتمے میں معاون ثابت ہو سکتا ہے ۔

انہوں نے کہا کہ آئین پاکستان ملک کی جمہوری قوتوں کا ایک نادر تحفہ ہے جو تمام شہریوں کے بنیادی حقوق کے بلاامتیاز تحفط کو یقینی بناتا ہے۔تاہم بدقسمتی سے آئین کی بالادستی صرف اخباری بیانات اور نعروں تک محدود ہے یہاں آئین و قانون کی بجائے اختیارات کی حکمرانی ہے۔

انہوں نے کہا کہ آئینی بالادستی کا راگ الاپنے والی قوتیں اس کے نکات کی خود دھجیاں اڑانے میں مصروف ہیں۔اگر آئین پاکستان پر عمل کیا جاتا تو آج پاکستان کی صورتحال مختلف ہوتی۔دہشت گردی، بدعنوانی، رشوت ستانی،اقرباپروری سمیت تمام بے قاعدگیوں کی بنیادی وجہ صاحبان اقتدار کا اپنے اختیارات سے تجاوز ہے۔

انہوں نے کہا کہ آج کے دن حکمران اگر آئین کی پاسداری کا پوری قوم سے وعدہ کرلیں اور پھر اس پر ثابت قدم رہیں تو ملک میں حقیقی جمہوریت آ سکتی ہے۔ شخصی حکومت کو جمہوریت کا نام دے کر آئین کا مزاق اڑایا ملک و قوم کے ساتھ بدترین دھوکہ ہے۔

انہوں نے کہا کہ آج کے دن تمام سیاسی قوتوں کو آئین کی بالادستی کو یقینی بنانے کا عہد کرنا چاہیے۔/۹۸۹/ف۹۴۰/

تبصرہ بھیجیں
نام:
ایمیل:
* ‫نظریہ‬:
‫برای‬ مہربانی اپنے تبصرے میں اردو میں لکھیں.
‫‫قوانین‬ ‫ملک‬ ‫و‬ ‫مذھب‬ ‫کے‬ ‫خالف‬ ‫اور‬ ‫قوم‬ ‫و‬ ‫اشخاص‬ ‫کی‬ ‫توہین‬ ‫پر‬ ‫مشتمل‬ ‫تبصرے‬ ‫نشر‬ ‫نہیں‬ ‫ہوں‬ ‫گے‬