30 June 2020 - 13:04
‫نیوز‬ ‫کوڈ‬: 443041
فونت
حجت الاسلام مقصود علی ڈومکی :
مجلس وحدت مسلمین پاکستان کے مرکزی ترجمان نے کہا کہ اقوام متحدہ کشمیر میں جاری ظلم و بربریت کا نوٹس لے۔

رسا نیوز ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق کشمیر فاؤنڈیشن کے زیر اہتمام کشمیر کے مظلوم مسلمانوں سے یکجہتی کے لئے اور نائجیریا کے سیاہ فام انقلابی رہنما علامہ ابراہیم زکزاکی اور ان کی اہلیہ محترمہ کی آزادی کے لئے کوئٹہ پریس کلب کے سامنے احتجاجی مظاہرہ کیا گیا ۔

احتجاجی مظاہرے سے خطاب کرتے ہوئے مجلس وحدت مسلمین پاکستان کے مرکزی ترجمان حجت الاسلام مقصود علی ڈومکی نے کہا ہے کہ کشمیر میں مودی سرکار کے مظالم انتہائی افسوس ناک ہیں۔ انڈیا اسرائیل کے طرز پر کشمیریوں پر ظلم و ستم کر رہا ہے کشمیر میں طویل عرصے سے کرفیو اور لاک ڈاؤن کی صورتحال کے سبب نظام زندگی مفلوج ہے۔ اقوام متحدہ کشمیر میں جاری ظلم و بربریت کا نوٹس لے۔

انہوں نےکہا کہ عالمی شہرت یافتہ نائجیریا کے ممتاز انقلابی رہنما علامہ ابراہیم زکزاکی اور ان کی اہلیہ کو بلا جواز قید کیا گیا ہے ابراہیم زکزاکی عالمی سطح کے انقلابی رہنما ہیں۔ نائیجیرین حکومت کی جانب سے نائیجیریا کے سیاہ فام مسلمانوں کا قتل عام کیا گیا ہے۔ انہوں نےکہا کہ علامہ ابراہیم زکزاکی دنیا بھر کے کروڑوں انسانوں کے محبوب رہنما ہیں۔

نائیجیرین حکومت سے مطالبہ کرتے ہیں کہ وہ فی الفور علامہ ابراہیم زکزاکی کو آزاد کرے۔ انہوں نے کہا کہ ابراہیم زکزاکی گولیوں کی وجہ سے زخمی ہیں لہذا ان کے علاج کا بھی فل فور بندوبست کیا جائے۔ نائجیریا حکومت کے مظالم کی وجہ سے ان کی ایک آنکھ بھی ضائع ہو چکی ہے اور ہمیں ان کی زندگی کے حوالے سے شدید تحفظات ہیں۔

انہوں نے کہا کہ عالمی ادارے دنیا بھر میں سیاہ فام انسانوں پر ہونے والے مظالم کا نوٹس لیں۔ اس موقع پر کشمیر فاؤنڈیشن کی رہنما کوثر جعفری نے کہا کہ کشمیریوں کی جدوجہد آزادی ضرور کامیاب ہوگئی پاکستان کے عوام نے ہمیشہ کشمیر اور فلسطین کے مظلوموں کے حق میں آواز بلند کی ہے اور انشاءاللہ کشمیر عنقریب آزاد ہوگا۔

انہوں نے اسرائیل کی جانب سے فلسطین کی بستیوں پر اسرائیلی قبضے کو عالمی قوانین کی خلاف ورزی قرار دیتے ہوئے کہا کہ ہم فلسطین کے عوام کی جدوجہد آزادی کی حمایت کرتے ہیں۔اس موقع پر احتجاجی مظاہرے سے آئی ایس او کوئٹہ ڈویژن کے صدر برادر احسان علی کشمیر فاونڈیشن کے رہنما طفیل اکبر اور دیگر نے بھی خطاب کیا۔

تبصرہ بھیجیں
نام:
ایمیل:
* ‫نظریہ‬:
‫برای‬ مہربانی اپنے تبصرے میں اردو میں لکھیں.
‫‫قوانین‬ ‫ملک‬ ‫و‬ ‫مذھب‬ ‫کے‬ ‫خالف‬ ‫اور‬ ‫قوم‬ ‫و‬ ‫اشخاص‬ ‫کی‬ ‫توہین‬ ‫پر‬ ‫مشتمل‬ ‫تبصرے‬ ‫نشر‬ ‫نہیں‬ ‫ہوں‬ ‫گے‬
تازه ترین خبریں
مقبول خبریں
پسندیده خبریں