25 July 2017 - 23:50
‫نیوز‬ ‫کوڈ‬: 429178
فونت
حجت الاسلام و المسلمین راجہ ناصر عباس جعفری:
لاہور میں ہونیوالے دہشتگردی کے واقعے پر اپنے مذمتی بیان میں سربراہ ایم ڈبلیو ایم کا کہنا تھا کہ ملک میں ہونیوالے دہشتگردی کے ہر سانحے کے بعد لشکر جھنگوی، جماعت الاحرار اور داعش سمیت مختلف جماعتوں کیطرف سے ذمہ داری قبول کی جاتی ہے، لیکن قانون نافذ کرنیوالے اداروں کیجانب سے کوئی قابل ذکر پیش رفت نہیں ہوتی۔
راجہ ناصر عباس جعفری

رسا نیوز ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق،  مجلس وحدت مسلمین پاکستان کے مرکزی سیکرٹری جنرل حجت الاسلام و المسلمین راجہ ناصر عباس جعفری نے فیروز پور روڈ لاہور میں ہونے والے دھماکے کے نتیجے میں قیمتی جانوں کے ضیاع پر گہرے رنج و غم کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ جب تک کالعدم جماعتوں کے سرغنوں اور سہولت کاروں پر آہنی ہاتھ نہیں ڈالا جاتا، تب تک ملک میں امن کے قیام کے دعوے سوائے طفل تسلی کے اور کچھ نہیں۔ ملک میں ہونے والے دہشت گردی کے ہر سانحے کے بعد لشکر جھنگوی، جماعت الاحرار اور داعش سمیت مختلف جماعتوں کی طرف سے ذمہ داری قبول کی جاتی ہے، لیکن قانون نافذ کرنے والے اداروں کی جانب سے کوئی قابل ذکر پیش رفت نہیں ہوتی۔ حکومت جب تک کالعدم جماعتوں کے ساتھ مصلحت پسندانہ انداز روا رکھا جائے گا، تب تک اس ملک کے باسیوں کو سکون میسر نہیں ہوسکتا۔ انہوں نے کہا کہ ملک کو بدامنی کا شکار کرکے عدم استحکام کی طرف دھکیلا جا رہا ہے۔ دہشت گردی کے عفریت نے ملک کو اقتصادی اعتبار سے مفلوج کرکے رکھ دیا ہے۔ ملک کی موجودہ صورتحال کے ذمہ دار نااہل حکمران ہیں، جو عوام کو تحفظ دینے کی بجائے اپنی کرپشن کے دفاع میں ساری قوتیں صرف کر رہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ لاہور کے اس دلخراش سانحہ نے پورے پاکستان کو غمزدہ کر دیا ہے۔ ہمارا حکومت سے مطالبہ ہے کہ پنجاب میں کالعدم جماعتوں کے خلاف بلاتاخیر آپریشن کیا جائے اور ان عناصر کو انصاف کے کٹہرے میں لایا جائے جو دہشت گرد تنظیموں کے ساتھ نظریاتی وابستگی رکھتے ہیں اور وطن عزیز میں ان کی راہ ہموار کرنا چاہتے ہیں۔ /۹۸۹/ ف۹۴۰

تبصرہ بھیجیں
نام:
ایمیل:
* ‫نظریہ‬:
‫برای‬ مہربانی اپنے تبصرے میں اردو میں لکھیں.
‫‫قوانین‬ ‫ملک‬ ‫و‬ ‫مذھب‬ ‫کے‬ ‫خالف‬ ‫اور‬ ‫قوم‬ ‫و‬ ‫اشخاص‬ ‫کی‬ ‫توہین‬ ‫پر‬ ‫مشتمل‬ ‫تبصرے‬ ‫نشر‬ ‫نہیں‬ ‫ہوں‬ ‫گے‬