‫‫کیٹیگری‬ :
17 December 2018 - 13:20
‫نیوز‬ ‫کوڈ‬: 438912
فونت
مولانا عباس انصاری:
جموں و کشمیر اتحاد المسلمین کے سربراہ نے انڈین فورسز کی جارحیت کو افسوسناک قرار دیتے ہوئے کہا کہ عام شہریوں پر براہ راست گولیوں کی بوچھاڑ کرنا لاقانونیت کی بدترین مثال اور خونین باب ہے۔
مولانا محمد عباس انصاری شبیر قمی

رسا ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق، جموں و کشمیر اتحاد المسلمین کے سربراہ مولانا محمد عباس انصاری نے فورسز کی جارحیت کو افسوسناک قرار دیتے ہوئے کہا کہ عام شہریوں پر براہ راست گولیوں کی بوچھاڑ کرنا لاقانونیت کی بدترین مثال اور خونین باب ہے۔

اس دوران انجمن شرعی شیعیان کے سربراہ آغا سید حسن نے کہا کہ بھارتی فورسز آپریشن آل آوٹ کے نام پرکشمیری حریت پسند قوم کی نسل کشی میں مصروف عمل ہے۔

انہوں نے کہا کہ بھارت کی موجودہ برسر اقتدار فرقہ پرست جماعت کشمیر میں قتل و غارتگری کا سلسلہ تیز کرکے اپنے عوام دشمن اقدامات سے بھارتی عوام کی توجہ ہٹانے کی کوشش کر رہی ہے۔

درایں اثنا جموں و کشمیر پیروان ولایت کے سربراہ مولانا سبط محمد شبیر قمی نے بھی عام شہریوں اور عسکریت پسندوں کو خراج پیش کرتے کہا کہ بھارت کے ان ہتھکنڈوں اور حربوں سے تحریک آزادی کچلنے والی نہیں ہے۔ /۹۸۸/ ن۹۴۰

 

تبصرہ بھیجیں
نام:
ایمیل:
* ‫نظریہ‬:
‫برای‬ مہربانی اپنے تبصرے میں اردو میں لکھیں.
‫‫قوانین‬ ‫ملک‬ ‫و‬ ‫مذھب‬ ‫کے‬ ‫خالف‬ ‫اور‬ ‫قوم‬ ‫و‬ ‫اشخاص‬ ‫کی‬ ‫توہین‬ ‫پر‬ ‫مشتمل‬ ‫تبصرے‬ ‫نشر‬ ‫نہیں‬ ‫ہوں‬ ‫گے‬