کشمیر کا مستقبل اور آزاد کشمیر
ہندوستان اور پاکستان کی بقاء اور سلامتی کشمیر سے وابستہ ہے۔ حقِ خود ارادیت کشمیریوں کا فطری، پیدائشی اور جمہوری حق ہے۔ کشمیر کے مستقبل کا فیصلہ کرنے کا حق صرف کشمیری ہی رکھتے ہیں، اُنہیں یہ حق دلوانا ہر باشعور انسان کی ذمہ داری ہے۔
ولادت امام رضا(ع) اور عشرہ کرامت کا حسن اختتام
امام رضا علیہ السلام کی ولادت با سعادت کے ایام کی مناسبت سے ہمارے گھروں میں ہر طرف چراغانی ہے ، مجازی فضا میں ہر سو مسرتوں کی انجمنیں سجی ہیں کرونا کے ایام میں ہم باہر تو نہیں نکل سکتے لیکن انٹرنیٹ کے ذریعہ جھان تشیع میں منائے جانے والے عشرہ کرامت سے ضرور مطلع ہو رہے ہیں
تاریخ پھر دہرائی
شطرنجی مامون نے اپنی تمام شطرنجی چالیں چلی لیکن کوئی سکون میسر نہ ہوا تو آخری راستہ حضرت امام علی رضاؑ میں دکھا ۔ اس لئے آپ کو زبردستی مدینہ سے خراسان بلا کر پہلے خلافت کی پیش کش کی تو عالم آل محمد نے اس کی تمام مکاریوں کے جواب میں فرمادیا۔۔۔۔۔
امام رضا(ع) کے تربیتی قصے
لوگوں کو اچھائی کی تعلیم دینے اور انھیں برائیوں سے روکنے کے بہت سے طریقے ہیں لیکن ان طریقوں میں جو سب سے زیادہ کارآمد، زیادہ بااثر اور جلدی مقصد تک پہونچانے والا ہے وہ عملی طریقہ ہے۔
امام رضا علیہ السلام اور ولی عہدی
امام علی ابن موسیٰ الرضا ؑکی زندگی کا ہم ترین واقعہ آپ کا ولی عہد ہونا ہے مامون نے اپنے چند افراد جیسے رجاء ابن ابی ضحاک اور یاسر خادم کو یہ ذمہ داری سونپی کہ مدینہ جاکر علی ابن موسیٰ الرضا ؑکو اس سفر پر راضی کریں اور آپ کو مدینہ سے خراسان تک لائے۔
سوشل میڈیا پر مذہبی فتنہ، سدباب کیسے ممکن
مذہبی فتنہ
یاد رکھیں لوٹ کھسوٹ اور چوری ڈکیتی کی صورت میں ہم کسی مجرم کو گرفتار کرسکتے ہیں، اسکو سزا بھی دے سکتے ہیں، لیکن پاکستان میں امریکی و اسرائیلی و ھندوستانی ایماء پر پھیلائی جانیوالی فرقہ وارانہ پرتشدد سوچ کے نتیجہ میں ہونیوالی تقسیم ہر گھر کو متاثر کردے گی۔
شیطان اپنے اولیاء کو وحی کر رہے ہیں
لاہوری گروپ اور ولایت شیطانی کا پرچم بردار گروہ بھی ویسا ہی ایک فتنہ ہے۔ یہ فتنہ بھی ہے، فتنہ گر بھی اور فتنہ پرور بھی، اس سے ہوشیار رہنا ضروری ہے۔ اس فتنے کی خصوصیات یہ ہیں کہ یہ دین کو علماء سے نہیں لینا چاہتا، اس لیے علماء کی توہین ان کا مشغلہ ہے۔
پاکستان میں تشیع ایک بار پھر نشانے پر
ایسا لگ رہا ہے کہ شیعہ کے مقابلے میں بریلویوں اور نصیریوں کو لایا جا رہا ہے، تحریک لبیک کے سربراہ مولانا آصف اشرف جلالی کو میدان میں اُتارا گیا ہے، جس سے دختر رسول، سیدہ کائناب کی شان میں گستاخی کروائی گئی، تاکہ اس کا شدید ردعمل سامنے آئے۔
فرقہ واریت سے ہوشیار
اپنے آپکو شیعہ کہلوانے والا کوئی ایک فرد یا گروہ کوئی غلط حرکت کرے یا اپنے آپکو سنی کہلوانے والا کوئی فرد یا گروہ غلط حرکت کرے تو ہمیں تمام شیعوں یا سنیوں کو مورد الزام نہیں ٹھہرانا چاہیے۔ جیسے چور کو شیعہ یا سنی کہنا غلط ہے۔
تازه ترین خبریں
مقبول خبریں