20 July 2016 - 10:38
‫نیوز‬ ‫کوڈ‬: 422525
فونت
حجت الاسلام عارف حسین واحدی:
شیعہ علماء کونسل پاکستان کے مرکزی سیکرٹری نے کہا : حکومت مسئلہ کشمیر کو مزید موثر انداز میں اٹھائے، ہم لوگ کشمیریوں کی اخلاقی اور سیاسی حمایت جاری رکھیں گے۔
حجت الاسلام عارف حسین واحدی




رسا نیوز ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق شیعہ علماء کونسل پاکستان کے مرکزی سیکرٹری جنرل حجت الاسلام عارف حسین واحدی نے یوم الحاق پاکستان کے موقع پر اپنے بیان اور مختلف وفود سے گفتگو کرتے ہوئے کہا : مقبوضہ کشمیر میں جاری بھارتی سفاکیت اور عوام کی مظلومیت عالمی اداروں کو کیوں نظر نہیں آتی ۔

انہوں نے وضاحت کرتے ہوئے کہا : حقوق بشیریت کی تنظیمیں، اقوام متحدہ کیوں خاموش ہیں، او آئی سی کیا اپنا وجود بھی رکھتی ہے، چالیس سے زائد افراد شہید کردیئے گئے لیکن کسی کے کانوں پر جوں تک نہیں رینگی ۔

شیعہ علماء کونسل پاکستان کے مرکزی سیکرٹری نے کہا :  حکومت مسئلہ کشمیر کو مزید موثر انداز میں اٹھائے، ہم لوگ کشمیریوں کی اخلاقی اور سیاسی حمایت جاری رکھیں گے۔

حجت الاسلام عارف حسین واحدی کا کہنا تھا کہ قائد ملت جعفریہ پاکستان حجت الاسلام سید ساجد علی نقوی کے حکم کی مکمل تائید کرتے ہیں جس میں انہوں نے مطالبہ کیا کہ مسئلہ کشمیر کو کشمیری عوام کی امنگوں کے مطابق حل کیا جائے اور تمام فریقوں کو ان کی خواہشات کا احترام کرنا چاہیے۔

انہوں نے کہا: حالیہ چند دنوں میں چالیس سے زائد نہتے کشمیریوں کو شہید کردیا گیا، کئی دہائیوں سے مقبوضہ وادی میں بھارتی فوج ظلم و ستم کے پہاڑ ڈھا رہی ہے لیکن افسوس حقوق بشیریت کی عالمی تنظیمیں، اقوام متحدہ خاموش تماشائی کا کردار ادا کررہی ہیں جبکہ عالم اسلام کی نمائندہ تنظیم او آئی سی معلوم نہیں اپنا وجود بھی رکھتی ہے یا نہیں، اس معاملے پر اس نمائندہ پلیٹ فارم کی خاموشی بھی انتہائی افسوسناک ہے ۔

حجت الاسلام عارف حسین واحدی نے تاکید کرتے ہوئے کہا : ہم مطالبہ کرتے ہیں کشمیریوں کو ان کا حق خود ارادیت دیا جائے، ان کی امنگوں کے مطابق فیصلہ کیا جائے، مسئلہ فلسطین و کشمیر عالم اسلام کے سلگتے مسائل ہیں، جنوبی ایشیا کا پائیدار امن بھی مسئلہ کشمیر سے جڑا ہے ۔ حکومت پاکستان مسئلہ کشمیر کو مزید موثر انداز میں اٹھائے ، اقوام متحدہ کو بھی چاہیے کہ اس سلسلے میں موثر اقدامات اٹھائے ۔
 

تبصرہ بھیجیں
نام:
ایمیل:
* ‫نظریہ‬:
‫برای‬ مہربانی اپنے تبصرے میں اردو میں لکھیں.
‫‫قوانین‬ ‫ملک‬ ‫و‬ ‫مذھب‬ ‫کے‬ ‫خالف‬ ‫اور‬ ‫قوم‬ ‫و‬ ‫اشخاص‬ ‫کی‬ ‫توہین‬ ‫پر‬ ‫مشتمل‬ ‫تبصرے‬ ‫نشر‬ ‫نہیں‬ ‫ہوں‬ ‫گے‬