28 September 2016 - 15:17
‫نیوز‬ ‫کوڈ‬: 423503
فونت
یمن میں ایک اسپتال پر سعودی عرب کی بمباری جاری، ڈاکٹرس ود آؤٹ بارڈرس کی مذمت ۔
یمن

 

رسا نیوز ایجنسی کی رپورٹ‌ کے مطابق، ڈاکٹرس ود آؤٹ بارڈرس نے یمن پر سعودی اتحاد کے وحشیانہ حملے کی مذمت کی اور کہا : یمن میں اس کے زیر انتظام اسپتال پر حملے کا ذمہ دار سعودی عرب ہے ۔

 

ڈاکٹرس ود آؤٹ بارڈرس نے منگل کو جاری ہونے والی اپنی ایک تحقیقاتی رپورٹ میں  شمالی یمن میں اپنے زیر انتظام اسپتال پر حملے کا ذمہ دار سعودی عرب کو قرار دیا ہے ۔

انہوں نے  سعودی عرب کی زیر سربراہی جارح عرب اتحاد سے مطالبہ کیا : وہ اسپتالوں، اس کے سازوسامان، بنیادی ڈھانچوں، میڈیکل عملے اور بیماروں کی سیکورٹی کی ضمانت دے ۔

ڈاکٹرس ود آؤٹ بارڈرس نے اپنی رپورٹ میں کہا: اگست کے مہینے میں یمن میں اسپتال پر ہونے والا حملہ کسی طرح کے انتباہ اوراس ادارے سے کسی قسم کا کوئی رابطہ کئے بغیر کیا گیا ۔

اس ادارے نے اپنی رپورٹ میں کہا : سعودی اتحاد کے لڑاکا طیاورں نے اس تباہ کن حملے سے صرف پانچ منٹ پہلے ایک گاڑی کو نشانہ بنایا تھا جو اسپتال کی جانب آرہی تھی ۔

اس ادارے نے : ایک سعودی جنرل نے بھی اس بات کی تصدیق کی ہے ۔

ڈاکٹرس ود آؤٹ بارڈرس نے اس حملے کے بعد شمالی یمن کے چھے اسپتالوں سے اپنے کارکنوں کو باہرنکال لیا ہے ۔

واضح رہے کہ پندرہ اگست کو سعودی عرب نے یہ جارحانہ حملہ، شمالی یمن کے صوبہ حجہ کے عبس اسپتال پر کیا تھا جو تحریک انصار اللہ کے زیر انتظام ہے ۔

اس حملے میں انیس افراد جاں بحق اور چوبیس زخمی ہوگئے تھے ۔

سعودی عرب نے مارچ دو ہزار پندرہ سے یمن کے مستعفی صدر منصور ہادی کی حمایت کے لئے کھلی مداخلت و جارحیت کرتے ہوئے تحریک انصار اللہ کے زیر انتظام علاقوں پر حملے تیز کردیے ہیں ۔/۹۸۸/ن۹۳۰/ک۳۲۴

تبصرہ بھیجیں
نام:
ایمیل:
* ‫نظریہ‬:
‫برای‬ مہربانی اپنے تبصرے میں اردو میں لکھیں.
‫‫قوانین‬ ‫ملک‬ ‫و‬ ‫مذھب‬ ‫کے‬ ‫خالف‬ ‫اور‬ ‫قوم‬ ‫و‬ ‫اشخاص‬ ‫کی‬ ‫توہین‬ ‫پر‬ ‫مشتمل‬ ‫تبصرے‬ ‫نشر‬ ‫نہیں‬ ‫ہوں‬ ‫گے‬