07 December 2016 - 14:56
‫نیوز‬ ‫کوڈ‬: 424916
فونت
اے آئی جی آپریشنز سندھ پاکستان:
آئی جی سندھ نے رپورٹ کا جائزہ لیتے ہوئے پولیس کو جاری ہدایات میں کہا : لاڑکانہ، حیدرآباد، سکھر، میرپورخاص اور باالخصوص کراچی میں سیکیورٹی اقدامات کے تسلسل کو جاری رکھتے ہوئے تمام تر فوکس ۱۲ ربیع الاول کے مرکزی اجتماعات و دیگر کی سیکیورٹی پر رکھا جائے۔
جلوس

 

رسا نیوز ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق، کراچی میں برآمد ہونیوالے چپ تعزیہ کے جلوسوں کی سیکیورٹی پر مرکزی اجتماع کے مقامات اور روٹس پر مجموعی طور پر 8628 پولیس افسران و جوانوں کو تعینات کیا جارہا ہے۔

یہ بات اے آئی جی آپریشنز سندھ نے آئی جی سندھ اے ڈی خواجہ کو مورخہ 8 ربیع الاول چپ تعزیہ سیکیورٹی اقدامات پر مشتمل ایک رپورٹ میں بتائی۔

شیراز نذیر نے آئی جی سندھ کو بتایا :  نشتر پارک تا حسینیہ ایرانیاں ہال جلوس کے لئے 5020 جبکہ رضویہ سوسائٹی تا امام بارگاہ شاہ نجف جلوس کے لئے 3608 پولیس افسران اور جوانوں کو سیکیورٹی فرائض پر مامور کیا جارہا ہے۔

آئی جی سندھ نے رپورٹ کا جائزہ لیتے ہوئے پولیس کو جاری ہدایات میں کہا کہ لاڑکانہ، حیدرآباد، سکھر، میرپورخاص اور باالخصوص کراچی میں سیکیورٹی اقدامات کے تسلسل کو جاری رکھتے ہوئے تمام تر فوکس 12 ربیع الاول کے مرکزی اجتماعات، جلوسوں، محافل میلاد، نعت، وعظ، تقاریر و دیگر کی سیکیورٹی پر رکھا جائے، اس ضمن میں متعلقہ اسٹیک ہولڈرز سے باہمی مشاورت اور ان کی تجاویز کی روشنی میں مرتب کردہ سیکیورٹی پلان پر عمل درآمد کو ہر سطح پر ٹھوس اور غیرمعمولی بنایا جائے۔/۹۸۸/ن۹۴۰

تبصرہ بھیجیں
نام:
ایمیل:
* ‫نظریہ‬:
‫برای‬ مہربانی اپنے تبصرے میں اردو میں لکھیں.
‫‫قوانین‬ ‫ملک‬ ‫و‬ ‫مذھب‬ ‫کے‬ ‫خالف‬ ‫اور‬ ‫قوم‬ ‫و‬ ‫اشخاص‬ ‫کی‬ ‫توہین‬ ‫پر‬ ‫مشتمل‬ ‫تبصرے‬ ‫نشر‬ ‫نہیں‬ ‫ہوں‬ ‫گے‬