14 June 2017 - 17:11
‫نیوز‬ ‫کوڈ‬: 428540
فونت
قائد ملت جعفریہ پاکستان:
قائد ملت جعفریہ پاکستان حجت الاسلام و المسلمین سید ساجد علی نقوی نے کہا ہے کہ شیعہ سنی میں فقہی و اجتہادی اختلاف کی بنیاد پر مخالفانہ نعرے اور فتوے نہیں لگائے جا سکتے، ملک میں اتحاد کی فضا موجود ہے ۔
حجت الاسلام و المسلمین سید ساجد علی نقوی شیعہ علماء کونسل کی جانب سے لاہور میں  افطار

رسا نیوز ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق، شیعہ علماء کونسل کی جانب سے لاہور میں دیئے گئے افطار ڈنر سے خطاب اور میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے قائد ملت جعفریہ پاکستان حجت الاسلام و المسلمین سید ساجد علی نقوی نے کہا ہے کہ شیعہ سنی میں فقہی و اجتہادی اختلاف کی بنیاد پر مخالفانہ نعرے اور فتوے نہیں لگائے جا سکتے، ملک میں اتحاد کی فضا موجود ہے، آئین قرآن وسنت کیخلاف قانون سازی کی اجازت نہیں دیتا، اسلامی نظریاتی کونسل کی سفارشات کے مطابق اسلامی نظام نافذ کیا جائے، جن پر تمام مکاتب فکر کا اتفاق موجود ہے۔ انہوں نے کہا کہ پاناما لیکس کا آئین و قانون کے مطابق فیصلہ ہر فریق کو تسلیم کرنا ہوگا، عسکری اتحاد کے تناظر میں پاکستان کی ذمہ داری ہے کہ فتنوں کو اندر نہ آنے دے اور کشیدگی کو ختم کروانے میں اپنا کردار ادا کرے۔
 
اسلامی تحریک پاکستان کے سربراہ کا کہنا تھا کہ دینی جماعتیں ملی یکجہتی کونسل کے پلیٹ فارم پر موجود ہیں، سیاسی اتحاد کیلئے رابطے جاری ہیں، جے یو آئی اور جماعت اسلامی میں بھی اختلافات ختم کرانے کا طریقہ کار نکل آئے گا، سیاسی اتحاد کیلئے اسلامی تحریک کی ترجیح دینی جماعتیں ہیں۔

انہوں نے کہا کہ ملک میں شیعہ سنی فساد موجود نہیں، کچھ لوگوں کو اس مقصد کیلئے خریدا گیا، کسی مسلک کی توہین تشیع کا شعار نہیں۔/۹۸۸/ ن۹۴۰
 

تبصرہ بھیجیں
نام:
ایمیل:
* ‫نظریہ‬:
‫برای‬ مہربانی اپنے تبصرے میں اردو میں لکھیں.
‫‫قوانین‬ ‫ملک‬ ‫و‬ ‫مذھب‬ ‫کے‬ ‫خالف‬ ‫اور‬ ‫قوم‬ ‫و‬ ‫اشخاص‬ ‫کی‬ ‫توہین‬ ‫پر‬ ‫مشتمل‬ ‫تبصرے‬ ‫نشر‬ ‫نہیں‬ ‫ہوں‬ ‫گے‬