19 June 2017 - 17:44
‫نیوز‬ ‫کوڈ‬: 428616
فونت
حجت الاسلام سید حسن ہمدانی:
ہنگامی اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے ایم ڈبلیو ایم لاہور کے سیکرٹری جنرل کا کہنا تھا کہ اگر لاہور انتظامیہ نے شہید کے قاتلوں اور ان کے سہولت کاروں کیخلاف کارروائی نہ کی تو پنجاب بھر میں نماز عید کے موقع پر احتجاج کرینگے اور وزیر اعلیٰ ہاوس کے سامنے مطالبات کی منظوری تک دھرنا بھی دینگے۔
حجت الاسلام سید حسن ہمدانی

رسا نیوز ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق، مجلس وحدت مسلمین لاہور کے جنرل سیکرٹری حجت الاسلام سید حسن ہمدانی نے ضلعی کابینہ کے ہنگامی اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ لاہور شہر میں فرقہ وارانہ بنیاد پر نوجوان ذوالفقار کا داعشی و تکفیریوں کے ہاتھوں بہیمانہ قتل قابل مذمت ہے، آپریشن ردالفساد کے ہوتے ہوئے ایسے شدت پسندوں کا سرعام قتل و غارت گری کا بازار گرم کرنا لمحہ فکریہ ہے۔

انہوں نے کہا: لاہور میں ان شدت پسندوں کیخلاف کارروائی ہوئی ہی نہیں، اسی شمالی لاہور میں چند دنوں قبل ایک فقہ جعفریہ سے تعلق رکھنے والے نوجوان کی لاش کو تدفین سے روک دیا تھا، اگر اسی وقت ان شرپسندوں کیخلاف کارروائی ہوتی تو آج یہ المناک واقعہ پیش نہ آتا۔

حجت الاسلام ہمدانی نے کہا : ہم لاہور انتظامیہ، آئی جی پولیس سمیت دیگر قانون نافذ کرنیوالے اداروں سے مطالبہ کرتے ہیں کہ ان شرپسندوں گرفتار کرکے اس کا مقدمہ فوجی عدالتوں کے سپرد کیا جائے۔

انہوں نے کہا : لاہور پولیس نے مقتول کے ایف آئی آر میں انسداد دہشتگردی کے دفعات شامل نہ کرکے اپنی دہشتگردوں سے ہمدردی کا واضح ثبوت دیا ہے، ان شاءاللہ شہید کے خون ناحق کو رائیگاں نہیں جانے دینگے۔

حجت الاسلام  ہمدانی نے کہا کہ اس علاقے میں موجود مسجد کا امام مسلسل شرپسندی پھیلانے میں مصروف ہے اور اس مظلوم شہید کی شہادت میں اس شرپسند کا کلیدی کردار ہے، شہید کے خاندان اور ان کے عزیزوں کو اب بھی دھمکیاں دے رہے ہیں، اگر لاہور انتظامیہ نے شہید کے قاتلوں اور ان کے سہولت کاروں کیخلاف کارروائی نہ کی تو پنجاب بھر میں نماز عید کے موقع پر احتجاج کرینگے اور وزیر اعلیٰ ہاوس کے سامنے مطالبات کی منظوری تک دھرنا بھی دینگے۔ /۹۸۸/ ن۹۴۰

تبصرہ بھیجیں
نام:
ایمیل:
* ‫نظریہ‬:
‫برای‬ مہربانی اپنے تبصرے میں اردو میں لکھیں.
‫‫قوانین‬ ‫ملک‬ ‫و‬ ‫مذھب‬ ‫کے‬ ‫خالف‬ ‫اور‬ ‫قوم‬ ‫و‬ ‫اشخاص‬ ‫کی‬ ‫توہین‬ ‫پر‬ ‫مشتمل‬ ‫تبصرے‬ ‫نشر‬ ‫نہیں‬ ‫ہوں‬ ‫گے‬