06 April 2020 - 18:32
‫نیوز‬ ‫کوڈ‬: 442455
فونت
علامہ نیاز نقوی:
وفاق المدارس الشیعہ پاکستان کے مرکزی نائب صدر نے ایران و عراق کے زائرین کے ساتھ ناروا سلوک کی شدید مذمت کی اور کہا: نیگیٹو ٹیسٹ رپورٹ انے کے بعد بھی زائرین کو روکنا تبعیض امیز برتاو کی نشانی ہے ۔

رسا ںیوز ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق، وفاق المدارس الشیعہ پاکستان کے مرکزی نائب صدر علامہ قاضی نیاز حسین نقوی نے ملتان قرنطینہ سے نیگیٹو رزلٹ آنے کے باوجود زائرین کو اپنے گھروں کی بجائے اضلاع کی قرنطینہ میں منتقل کرنے کی شدید مذمت کرتے ہوئے مطالبہ کیا ہے کہ کہ ایران اور عراق کے مقدس مقامات کی زیارت کرکے واپس آنے والوں کو فی الفور رہا کیا جائے۔

لاہور میں علماء سے گفتگو میں انہوں نے کہا کہ پنجاب انتظامیہ مسلسل جھوٹ کا سہارا لے رہی ہے، جب کہ ان زائرین نے تفتان بارڈر پر اذیت ناک ایام گزارنے کے بعد ملتان میں بھی 14 کی بجائے 18دن گزار لئے، ان کے ٹیسٹ لئے گئے، لیکن ٹیسٹ نیگیٹو آنے کے بعد بھی انہیں گھر بھیجنے کی بجائے متعلقہ اضلاع میں قید کردیا گیا ہے، یہ ظلم اور انسانی حقوق کی خلاف ورزی ہے۔

انہوں نے کہا کہ ہم وزیراعظم عمران خان اور مشیر صحت ڈاکٹر ظفر مرزا سے مطالبہ کرتے ہیں کہ زائرین کو فوری طور پر رہا کرکے ان کے گھروں میں پہنچایا جائے۔

علامہ نیاز نقوی نے حکومت سے استفسار کیا کہ کیا اسی طرح کا رویہ امریکہ، برطانیہ، اسپین، اٹلی، سعودی عرب، متحدہ عرب امارات اور دیگر ممالک سے آنیوالے مسافروں کیساتھ بھی روا رکھا گیا ہے، یا یہ تذلیل صرف اور صرف ایران سے آنیوالے زائرین کیلئے ہے؟ حقیقت حال یہ ہے کہ زائرین اور دوسرے ممالک سے آنیوالے شہریوں کیلئے قانون الگ الگ ہے۔

انہوں نے کہا کہ ہم متوجہ کرتے ہیں کہ حکومت ہوش کے ناخن لے اور انتباہ کرتے ہیں کہ زائرین کا مسئلہ حل نہ کیا گیا تو عوام میں پایا جانا اشتعال حکومت کیلئے مشکلات کا باعث بنے گا۔/۹۸۸/ن

تبصرہ بھیجیں
نام:
ایمیل:
* ‫نظریہ‬:
‫برای‬ مہربانی اپنے تبصرے میں اردو میں لکھیں.
‫‫قوانین‬ ‫ملک‬ ‫و‬ ‫مذھب‬ ‫کے‬ ‫خالف‬ ‫اور‬ ‫قوم‬ ‫و‬ ‫اشخاص‬ ‫کی‬ ‫توہین‬ ‫پر‬ ‫مشتمل‬ ‫تبصرے‬ ‫نشر‬ ‫نہیں‬ ‫ہوں‬ ‫گے‬
تازه ترین خبریں
مقبول خبریں
پربحث
پسندیده خبریں