21 October 2017 - 12:55
‫نیوز‬ ‫کوڈ‬: 430471
فونت
افغانستان:
افغانستان میں کل مسجد امام زمان (عج) اور غور کی مسجد میں ہونے والے دھماکوں کی ذمہ داری دہشتگرد گروہ داعش نے قبول کی ہے۔
افغانستان دھماکہ

رسا ںیوز ایجنسی نے کی رپورٹ کے مطابق، کابل سے ہمارے نمائندے کے مطابق مسجد امام زمان(عج)میں بم کا یہ دھماکہ اس وقت ہوا جب نمازیوں کی بڑی تعداد نماز مغرب و عشا کی ادائیگی میں مصروف تھی۔

کابل پولیس نے بھی خودکش حملے  کی تصدیق کرتے ہوئے 39 نمازیوں کے شہید ہونے کی خـبر دی ہے۔ شہید ہونے والوں میں مسجد کے پیش امام حجت الاسلام فصیحی بھی شامل ہیں۔

 کم سے کم پینتالیس افراد زخمی بتائے جاتے ہیں جن میں سے متعدد افراد کی حالت نازک ہے۔

کابل دھماکے کے کچھ ہی دیر بعد افغانستان کے صوبے غور کی مسجد میں بھی خودکش حملے کے نتیجے میں 33 سے زائد افراد شہید اور 10  زخمی ہوگئے۔

 ترجمان افغان وزارت داخلہ کے مطابق سیکیورٹی فورسز نے علاقے کو گھیرے میں لے کر شواہد اکٹھے کرکے تحقیقات شروع کردی ہیں۔

افغان صدر اشرف غنی نے دھماکوں کی مذمت کرتے ہوئے افسوس کا اظہار کیا۔

اس سے پہلے بھی افغانستان کے شیعہ مسلمانوں کے خلاف دہشت گردانہ حملوں کی ذمہ داری دہشت گرد گروہ داعش نے قبول کی تھی۔ /۹۸۸/ ن۹۴۰

تبصرہ بھیجیں
نام:
ایمیل:
* ‫نظریہ‬:
‫برای‬ مہربانی اپنے تبصرے میں اردو میں لکھیں.
‫‫قوانین‬ ‫ملک‬ ‫و‬ ‫مذھب‬ ‫کے‬ ‫خالف‬ ‫اور‬ ‫قوم‬ ‫و‬ ‫اشخاص‬ ‫کی‬ ‫توہین‬ ‫پر‬ ‫مشتمل‬ ‫تبصرے‬ ‫نشر‬ ‫نہیں‬ ‫ہوں‬ ‫گے‬