07 July 2010 - 13:06
‫نیوز‬ ‫کوڈ‬: 1542
فونت
رہبر معظم انقلاب اسلامی:
رسا نیوزایجنسی - رہبر معظم انقلاب اسلامی حضرت آیت اللہ العظمی خامنہ ای نے مجمع تشخیص مصلحت نظام کے ساتھ صلاح و مشورے کے بعد درست استعمال کی کلی پالیسیوں کو معین اور ابلاغ کیا ہے۔
رہبر معظم انقلاب اسلامي

رسا نیوزایجنسی کی رھبرمعظم کی خبر رساں سائٹ سے منقولہ رپورٹ کے مطابق ، رہبر معظم انقلاب اسلامی حضرت آیت اللہ العظمی خامنہ ای نے مجمع تشخیص مصلحت نظام کے ساتھ صلاح و مشورے کے بعد درست استعمال کی کلی پالیسیوں کامتن تینوں قوا کے سربراہان اور مجمع تشخیص مصلحت نظام کے سربراہ کو بھیج دیا گیا ہےان کلی پالیسیوں کا متن حسب ذیل ہے:

بسم اللہ الرحمن الرحیم

درست اور صحیح استعمال کی کلی پالیسیاں

1۔ شخصی، اجتماعی اور اداری استعمال میں اصلاح ، قناعت اوردرست استعمال کا فروغ ، فضول خرچی، اسراف ،تبذیر ، تجملاتی امور سے دوری ، ثقافتی ، علمی ، ہنری ذرائع بالخصوص قومی ذرائع کی ظرفیتوں سے استفادہ کرتے ہوئے بیرونی اشیاء کے استعمال سے پرہیز۔

2۔ مطلوب استعمال کے سلسلے میں عام تعلیم و آگاہی۔

3۔ بہتر استعمال اور اس کےاچھے نمونوں کو پیش کرنے اور ان کے فروغ اور توسعہ کے سلسلے میں مفید وکامیاب معیاروں پر تاکید، احساس ذمہ داری، نظم و انضباط اور عوامی رضامندی پر تاکید ۔

4۔ یونیورسٹیوں کے تمام تخصصی اور عمومی شعبوں میں درست استعمال کی روشوں اور اصولوں کی تعلیم و تربیت۔

5۔ درست استعمال کی رعایت کے سلسلے میں حکومت، حکومتی کمپنیوں اور حکومتی اداروں کی جانب سےپیشقدمی۔

6۔ فضول خرچی و تجملاتی اشیاء اور وسائل کی ترویج کے خلاف عملی احساسات کے اظہار اور مقابلہ پر تاکید۔

7۔ انرجی کے درست استعمال کے سلسلے میں قیمت اور دیگر اقدامات کے تعادل کو برقرار رکھتے ہوئےانرجی کے معیار کو پانچویں ترقیاتی منصوبہ کے آخر تک موجودہ معیار سے کم سے کم دو تہائی اور چھٹے ترقیاتی منصوبہ کے آخر تک موجودہ معیار سےکم سے کم نصف حصہ تک مندرجہ ذیل پالیسیوں کی روشنی میں کم کرنے پر تاکید۔

۔ تولید و پیداوار میں ترجیحی بنیاد پراضافہ ،انرجی کے استعمال و انتقال اور انرجی کی پیداوار کی نئی ظرفیتوں میں اضافہ۔

۔ ملک میں انرجی کے درست استعمال کے سلسلے میں یکساں اورجامع مطالعات پر تاکید

۔ انرجی کے استعمال میں قومی پروگرام کی تدوین اور مالی سہولت و تشویق اور درست استعمال کے اجراء کے لئے بینکی سہیولیات کی فراہمی اورانرجی کو کارآمد بنانے کے لئے حضوصی اور عوامی اداروں کی تشکیل پر تاکید۔

۔ مناسب طریقوں سے انرجی کے بلند مدت معیاروں کی تدوین و تشکیل۔

۔ انرجی کے استعمال اور فروخت سے متعلق قوانین پر تجدید نظراور مناسب قوانین کی منظوری ، انرجی کے تمام وسائل کی درآمد اور پیداوار کے لئےقومی اسٹینڈرڈ کا لحاظ،اس کے اجراء اور تقویت پر دقیق نظراور انرجی پیدا کرنے والوں کو انرجی پیدا کرنے والے وسائل کی اصلاح کا پابند بنانا۔

۔ حمل و نقل کے وسائل کی اصلاح اور شہر کے اندر اور باہر انرجی کو منتقل کرنے کے لئے ریل کی سہولیات فراہم کرنے پر تاکید ۔

۔ بجلی گھروں میں اضافہ ۔ بجلی فراہم کرنے کے لئے مختلف ذرائع‏ سے استفادہ، اور بجلی کی جدید اور نئی روشوں سے بھر پور استفادہ پر تاکید ۔

۔ بجلی کے مختلف پلانٹس سے بجلی کی پیداوار میں اضافہ، کم حجم اور زیادہ پیداواراور بجلی و حرارت کی باہم پیداوار پر تاکید۔

۔ انرجی منتقل کرنے کے وسائل کی اصلاح، اور ریل و پائپ لائنوں کے ذریعہ انرجی منتقل کرنے پر اہتمام۔

8۔ زراعت اور دیگر تمام شعبوں میں پانی کے درست استعمال میں مندرجہ ذیل پالیسیوں کے دائرے میں رہ کر اہتمام پر تاکید ۔

۔ مختلف شعبوں میں پانی کے درست استعمال کے سلسلے میں قومی سند کی تدوین اور تشکیل پر تاکید۔

۔پانی کے منصوبوں،پانی نکالنے اورپانی کے استعمال اورحفاظت میں مالی تشویق اور حمایت کی پالیسیوں سے استفادہ پر تاکید۔

۔ پانی کو ضائع ہونے سے بچانے کے لئے ضروری قوانین کی تدوین اور قومی اسٹینڈرڈ کا لحاظ، پانی کو آلودہ ہونے سے بچانے کے لئے ضروری اقدامات انجام دینے پر تاکید۔

۔ زرعی زمینوں کی درست اور جدید روش کے ذریعہ سینچائی اورآبیاری، پینے کےپانی کی درست فراہمی و تقسیم اور اقتصادی استعمال کے لحاظ سے اس کی پیداوار پر خصوصی توجہ پر تاکید۔

۔ پانی کے مجدد استفادہ کے منصوبہ کی تدوین پر تاکید۔

۔ پانی کے استعمال اور پیداواری ذرائع کے درمیان تعادل برقرار کرنے کے لئے مناسب منصوبوں کی تدوین اور اجراء بالخصوص زیر زمین پانی کے ذخیروں کی حفاظت اور علاقائی شرائط کے پیش نظرخشکسالی اور سیلاب سے بچنے کے لئے مناسب اقدام عمل میں لانے پر تاکید ۔
تبصرہ بھیجیں
نام:
ایمیل:
* ‫نظریہ‬:
‫برای‬ مہربانی اپنے تبصرے میں اردو میں لکھیں.
‫‫قوانین‬ ‫ملک‬ ‫و‬ ‫مذھب‬ ‫کے‬ ‫خالف‬ ‫اور‬ ‫قوم‬ ‫و‬ ‫اشخاص‬ ‫کی‬ ‫توہین‬ ‫پر‬ ‫مشتمل‬ ‫تبصرے‬ ‫نشر‬ ‫نہیں‬ ‫ہوں‬ ‫گے‬