16 January 2011 - 13:25
‫نیوز‬ ‫کوڈ‬: 2302
فونت
سني وقف بورڈ لکھنو :
رسا نيوزايجنسي - سني وقف بورڈ لکھنو نے مسجد نور کي شھادت کو شر انگيزي ، تعصب اور دھشت گردي کي بدترين مثال بيان کيا ?
مسجد



رسا نيوزايجنسي کے رپورٹرکي رپورٹ کے مطابق ، سني وقف بورڈ لکھنوھندوستان کے صدر شھاب الدين اور جنرل سکريٹري سميت ديگر افراد نے ايک مشترکہ بيان ميں کہا : مسجد نور کي تابندگي قيام قيامت تک باقي رہے گي جس کي روشني ميں بھٹکتي ہوئي انسانيت اور راہ حق تلاش کرتي اقوام عالم راہ حق پاکرمنزل مقصود حاصل کريں گي ?

انہوں نے مزيد کہا : معصوم وبے گناہ مسلمانوں کو قيد وبند کي صعوبتوں ميں سالہا سال مبتلا کرکے لاتعداد گھر اجاڑنےکے بعد اب مسجدوں کے تاراج کرنے کي باري ہے ?

انہوں نے مسلمانوں کو مشق ظلم وستم بنانے کے ذمہ داران سے مولانا احمد بخاري کے مطالبات واحتجاج کي حمايت کرتے ہوئے اسے ھر منصف ضمير کي اواز قرار ديا اورکہا : شھيد مسجد کا پاک علاقہ بھي مسجد ہے اور اس پر نماز پڑھنا مسلمانوں کي پيدائشي ، مذھبي اور ائيني حق ہے ?
تبصرہ بھیجیں
نام:
ایمیل:
* ‫نظریہ‬:
‫برای‬ مہربانی اپنے تبصرے میں اردو میں لکھیں.
‫‫قوانین‬ ‫ملک‬ ‫و‬ ‫مذھب‬ ‫کے‬ ‫خالف‬ ‫اور‬ ‫قوم‬ ‫و‬ ‫اشخاص‬ ‫کی‬ ‫توہین‬ ‫پر‬ ‫مشتمل‬ ‫تبصرے‬ ‫نشر‬ ‫نہیں‬ ‫ہوں‬ ‫گے‬