27 January 2011 - 18:20
‫نیوز‬ ‫کوڈ‬: 2347
فونت
رسا نيوزايجنسي – ايک صھيوني اسکالر نے يوروپ ميں مسلمانوں کي تعداد ميں اضافہ کي بہ نسبت اگاہ کيا اور اسے صھيونيت کے خوف کا سبب بيان کيا ?
يوروپ ميں مسلمانوں کي تعداد ميں مسلسل اضافہ کے سبب اسرائيل پريشان


رسا نيوزايجنسي کي اسرائيل نيشل نيوز سے منقولہ رپورٹ کے مطابق ، سورن کرن (Soeren Kern) ايک اسرائيلي اسکالر نے يوروپ ميں مسلمانوں کي تعداد ميں مسلسل اضافہ کي بہ نسبت اگاہ کيا اور اسے صھيونيت کے خوف کا سبب بيان کيا ?

اس نے لکھا : انگلينڈ ميں تقريبا تين ملين مسلمان رہتے ہيں ، فرانس ميں چار ملين مسلمان ہيں اور جرمن ميں پانچ ملين کے قريب مسلمان زندگي بسر کرتے ہيں اسي لئے اسے مسلمانوں کا گھر کہتے ہيں ?

اس اسکالر نے تحرير کيا : اسلامي ممالک سے رابطہ بڑھانے والے ممالک ميں روز بروز اضافہ ہوتا جارہا ہے اوريہ ممالک راضي ہيں کہ اسرائيل کے خلاف اقوام متحدہ ميں اقدام کيا جائے ?

اس نے مزيد کہا : يوروپ ميں اسلام بہت تيزي سے پھيل رہا ہے اور تبليغات اثر انداز نہي ہيں کيوں کہ مسلمان گزشتہ تين دہائي کي بہ نسبت تين برابر ہوچکے ہيں ?
تبصرہ بھیجیں
نام:
ایمیل:
* ‫نظریہ‬:
‫برای‬ مہربانی اپنے تبصرے میں اردو میں لکھیں.
‫‫قوانین‬ ‫ملک‬ ‫و‬ ‫مذھب‬ ‫کے‬ ‫خالف‬ ‫اور‬ ‫قوم‬ ‫و‬ ‫اشخاص‬ ‫کی‬ ‫توہین‬ ‫پر‬ ‫مشتمل‬ ‫تبصرے‬ ‫نشر‬ ‫نہیں‬ ‫ہوں‬ ‫گے‬