29 January 2011 - 15:31
‫نیوز‬ ‫کوڈ‬: 2349
فونت
آيت الله جوادي آملي:
رسا نيوزايجنسي - حضرت آيت الله جوادي آملي نے يہ بيان کرتے ہوئے کہ الھي اور الحادي نظريہ ھرگز يک جا نہي ہوسکتے کہا : يونيسکو اخلاقيات کي دنيا ميں کلام نہي کرتا وہ جوکچھ بھي کہتا ہے سماجيات اور حياتيات کے سلسلے ميں ہي کہتا ہے يعني الهي باتيں کرتا ہے مگر الحادي سوچتا ہے ?
آيت الله جوادي آملي

رسا نيوزايجنسي کے رپورٹر کي رپورٹ کے مطابق ، حوزہ علميہ قم کے معروف استاد ، حضرت آيت‌الله عبدالله جوادي آملي نے ثقافت و اسلامک گايڈينس کے وزير اور بين الاقوامي اخلاق کانفرنس کے ارکان سے ملاقات ميں کہا : يونيسکو اوراس جيسے ادارے جس ميں الھي اور الحادي افکار کے لوگ موجود ہيں ھرگز مشترک مقاصد حاصل نہي کرسکتے کيوں کہ ذاتي مسائل ومعاملات ميں چشم پوشي ممکن ہے مگر علمي ، ثقافتي اور جنيٹيکل مسائل کسي کے اختيار ميں نہي اور اس ميں عوام کے حقوق سے چشم پوشي يا اغماض نہي کيا جاسکتا ?

 
انہوں نے تاکيد کي : علمي ترقيات کے سبب انہوں نے بہت ساروں پہ ظلم کيا اس الحادي گروہ نے سب سے پہلا ستم جو علوم پر کيا وہ انسانوں کو حيوانيت کا جامہ پہنايا طب جو شريف ترين اورمعروف ترين علم ہے اسے اس قدر پست ديکھايا کہ اسے مويشيوں کا علم معرفي کيا ? 

قران کريم کے اس عظيم مفسر نے کہا : ان کي نگاہ ميں علم طب اور مويشيوں کے ڈاکٹر ميں کوئي فرق نہي  ، مويشيوں کے ڈاکٹر حيوانات کا علاج کرتے ہيں اور علم طب ان حيوانوں کا علاج کرتے ہيں جن کے پاس کلام کرنے کي صلاحيت موجود ہے ?

انہوں نے مزيد کہا : ان کے لحاظ سے موت انساني زندگي کي انتھا وخاتمہ ہے اس لحاظ سے صدام اورھيٹلر صفت انسانوں سے کوئي سوال کرنے والا نہي کہ کيوں تم نے اس طرح زندگي بسر کي روح ملکوتي و جان انساني ان کے نزديک فقط ايک افسانہ ہے ?
انہوں نے کہا :  حقيقت يہ ہے کہ قيامت کے دن تمام تبہکاروں سے سوال کيا جائے گا کہ کيوں تم گمراہي کے راستے پر چلے اور وہاں نيک صفت افراد کو انکي نيکوں کي جزا دي جائے  گي ? 

انہوں نے تاکيد کي : يونيسکو کے پاس اخلاقيات کے سلسلے ميں کہنے کو کچھ بھي نہي ہے ہاں وہ چڑيا گھر کے اخلاقيات پر بحث کررہے ہيں ?

حضرت آيت الله جوادي آملي نے يہ بيان کرتے ہوئے کہ الھي اور الحادي نظريہ ھرگز يک جا نہي ہوسکتے کہا : اسلامک کانفرنس کے مشترکہ اصول ہيں اسے سلسلے ميں  گفتگو کرنے کا حق ہے مگريونيسکو کو يہ حق حاصل نہي ?

انہوں نے حايت کو امانت الھي بيان کرتے ہوئے کہا : ھميں اس کي حفاظت کي کوشش کرني چاھئے ھميں خود کشي کا حق نہي ہے کيوں کہ سب سے پہلے قبر ميں سوال کيا جائے گا کہ کيوں تم نے خود کشي کي ؟ اس لحاظ سے ممکن ہے يونيسکو حياتيات کي گفتگو کر مگر يہ حياتيات کي چڑيا گھروں کے لئے ہے انساني معاشرے کے لئے نہي ہے ? 
تبصرہ بھیجیں
نام:
ایمیل:
* ‫نظریہ‬:
‫برای‬ مہربانی اپنے تبصرے میں اردو میں لکھیں.
‫‫قوانین‬ ‫ملک‬ ‫و‬ ‫مذھب‬ ‫کے‬ ‫خالف‬ ‫اور‬ ‫قوم‬ ‫و‬ ‫اشخاص‬ ‫کی‬ ‫توہین‬ ‫پر‬ ‫مشتمل‬ ‫تبصرے‬ ‫نشر‬ ‫نہیں‬ ‫ہوں‬ ‫گے‬