19 May 2011 - 16:20
‫نیوز‬ ‫کوڈ‬: 2792
فونت
آيت الله مکارم شيرازي :
رسا نيوزايجنسي - حضرت آيت الله مکارم شيرازي نے قران کريم کي منزلت وعظمت کي جانب اشارہ کرتے ہوئے اس اسماني کتاب کو علماء وفقہاء کي پياس بجھانے کا وسليہ بيان کيا اور کہا : قران کريم ايک ايسا نور ہے جو ھرگز خاموش نہي ہوگا?
آيت الله ناصر مکارم شيرازي

رسا نيوزايجنسي کے رپورٹر کي رپورٹ کے مطابق ، مراجع تقليد قم ميں سے حضرت آيت الله ناصر مکارم شيرازي نے اج اپنے سلسلے وار درس تفسير ميں جو سيکڑوں طلاب و افاضل حوزہ علميہ قم کي موجودگي ميں مدرسہ امير المومنين عليہ السلام ميں منعقد ہوا قران کريم کي عظمت و منزلت کا تذکرہ فرمايا اور اس کتاب کي عظمت کے سلسلے ميں کتاب نہج البلاغہ کے کچھ ٹکرے قرات کئے ?

اس مرجع تقليد نے يہ بيان کرتے ہوئے کہ قران کريم نے علماء وفقہاء کي پياس بجھائي کہا : قران فقيہوں اور دانشوروں کے دل کي بہارہے اس اسماني کتاب ميں مومنين وصالحين کے خدا تک پہونچے کے راستے بتائے گئے ہيں ?

اس مرجع تقليد نے مزيد کہا : قران کريم ايک ايسي دوا ہے جس کے بعد کوئي دکھي نہ ہو ، قران وہ نور ہے جس کے بعد کوئي تاريکي نہ ہوگي ?

حضرت آيت الله مکارم شيرازي نے مزيد کہا : قران کريم وہ پناہ گاہ ہے جس کي چوٹي دشمنوں کي رسائي سے بالا تر ہے ، جن لوگوں نے قران کو مانا وہ کسي سے نہي ڈرتے ?

حوزہ علميہ قم کے اس معروف استاد نے بيان کيا : قران کريم ان لوگوں کے لئے ھدايت کا سرمايہ ہے جو اس کے راستے پر گامزن ہوں اور اس کي تعليمات پر عمل کرتے ہوں ، يہ اسماني کتاب استدلال کرنے والوں کے لئے پيروزي اور فرج ہے ?

حضرت آيت الله مکارم شيرازي نے واضح طور پر کہا : قران عمل کرنے والوں کے لئے وسيلہ نجات ہے ، قران پناہ لينے والوں کے لئے سپر اور حکم کرنے والوں کے لئے محکم دليل ہے ?

انہوں نے يہ بيان کرتے ہوئے کہ حقيقي قران کے سمجھنے والے امام علي عليہ السلام ہيں کہا : يہ کتاب دانشوروں کي پياس بجھانے والي ہے ، قران مومنين کے دل کي بہار ہے ?

اس مرجع تقليد نے يادہاني کي : قران کريم سے اشنائي سبب ہے کہ انسان کي توحيد وقيامت مکمل ہوجائے ، اس اسماني کتاب ميں سيکڑوں ايتيں ، توحيد الھي اور قيامت کے سلسلے ميں نازل ہوئي ہيں اگر انسان قران پر عمل کرے تو دنيا واخرت دونوں ميں کامياب ہوگا ?

حضرت آيت الله مکارم شيرازي نے يہ بيان کرتے ہوئے کہ قران کے زير سايہ افراد کامياب ہيں کہا : اگر انسان قران پر يقين رکھے اور اس کي تعليامت پر عمل کرے تو ظلم و جنايت کا مرتکب نہي ہوسکتا اوريہي حقيقي انسان ہے ?

قرآن کريم کے معروف مفسر نے يہ بيان کرتے ہوئے کہ قران کريم ميں انسانيت کا راز اغاز خلقت وقيامت سے اشنائي ہے کہا : اميد ہے کہ ھم سبھي قران کي باتوں پر عمل کرکے اپني رفتار وگفتار کو قراني کريں گے ?

اس مرجع تقليد نے تاکيد کي : اج مسلمانوں کي کاميابي کا راز قران کريم کي باتوں پر عمل ہے ھم بجائے اس کے مغربي دنيا کي يونيورسٹيز کے سامنے دست گدائي دراز کريں اور انساني علوم کو ان سے مانگيں قران کے سامنے کاسہ گدائي دراز کريں اور اپني عزت کو اس اسماني کتاب سے چاھيں ?
تبصرہ بھیجیں
نام:
ایمیل:
* ‫نظریہ‬:
‫برای‬ مہربانی اپنے تبصرے میں اردو میں لکھیں.
‫‫قوانین‬ ‫ملک‬ ‫و‬ ‫مذھب‬ ‫کے‬ ‫خالف‬ ‫اور‬ ‫قوم‬ ‫و‬ ‫اشخاص‬ ‫کی‬ ‫توہین‬ ‫پر‬ ‫مشتمل‬ ‫تبصرے‬ ‫نشر‬ ‫نہیں‬ ‫ہوں‬ ‫گے‬