22 June 2011 - 14:40
‫نیوز‬ ‫کوڈ‬: 2916
فونت
جمعيت الوفاق بحرين نے کہا :
رسا نيوزايجنسمي – ال خليفہ مخالف بحرين کي سب سے بڑي پارٹي نے بحريني ٹي وي کے پروگرام کو بحرينوں کے بيچ کينہ ونفرت پھيلانے کا سبب بيان کيا ?
جمعيت الوفاق

رسا نيوزايجنسي کي رپورٹ کے مطابق ال خليفہ مخالف بحرين کي سب سے بڑي شيعہ پارٹي " جمعيت شيعي الوفاق اسلامي " نے ايک اعلانيہ ميں بحريني ٹي وي کے فتنہ انگيز واختلافي پروگراموں کے نشر کئے جانے کوشديد محکوم کيا ?

اس اعلانيہ ميں ايا ہے کہ بحريني ٹي وي سے ايک عرصے سے نشر کئے جانے والے پروگرام نے بحريني شھريوں کے جذبات کو نشانہ بنايا ہے ?

الوافاق نے ايات القرمزي کے اعترافات کو نشر کئے جانے کو شديد محکوم کرتے ہوئے کہا کہ اس 20 سالہ بحريني شاعرہ کي تصاوير کا منتشر ہونا اورايک جوان خاتون کے احساسات سے کھلواڑ کيا جانا ملت بحرين کي اھانت اوراخلاق واداب اسلامي کي خلاف ورزي ہے ، ڈاکٹروں وبحريني مرد وزن کے اعترافات کو بحريني ٹي وي سے نشر کيا جانا اسلامي وعربي معاشرے ميں مذموم فعل ہے ?

بحرين کي اس بڑي شيعہ پارٹي نے اس طرح کے اقدامات کو دين ومذھب کے خلاف بتاتے ہوئے کہا کہ جو کچھ بھي بحريني ٹي وي سے نشر کيا جارہا ہے دين ومذھب وعبادت و علماء کے خلاف انجام شدہ اقدامات کا حصہ ہے اور بہت روشن ہے کہ اس طرح کے پروگرام کا نشر کيا جانا بحريني عوام کے ديني ومذھبي ، سماجي ، ثقافتي وانساني احساسات کو جريحہ دار کرنا ہے ?

جمعيت الوفاق نے مزيد کہا کہ کسي پر يہ بات پوشيدہ نہي کہ معاشرے ميں موجودہ کينے وغضب کي بنياد ملک کا ٹي وي ہے اور شھريوں پرھرقسم کا دباو وزيادتي فتنہ پرور بحريني ٹي وي کے پروگرام کا ثمرہ ونتيجہ ہے اور حکومت اس سلسلے ميں قصوروار ہے ?
تبصرہ بھیجیں
نام:
ایمیل:
* ‫نظریہ‬:
‫برای‬ مہربانی اپنے تبصرے میں اردو میں لکھیں.
‫‫قوانین‬ ‫ملک‬ ‫و‬ ‫مذھب‬ ‫کے‬ ‫خالف‬ ‫اور‬ ‫قوم‬ ‫و‬ ‫اشخاص‬ ‫کی‬ ‫توہین‬ ‫پر‬ ‫مشتمل‬ ‫تبصرے‬ ‫نشر‬ ‫نہیں‬ ‫ہوں‬ ‫گے‬