08 February 2012 - 17:32
‫نیوز‬ ‫کوڈ‬: 3776
فونت
ايراني صدرجمھوريہ نے وحدت کانفرنس ميں (1) :
رسا نيوزايجنسي – اسلامي جمھوريہ ايران کے صدر نے پچيسويں وحدت اسلامي کانفرنس ميں مغربي جمھوريت کو انسانيت کے لئے توھين جانا ?
ڈاکٹراحمدي نژاد
 
رسا نيوزايجنسي کے رپورٹر کي رپورٹ کے مطابق ، ايراني صدرجمھوريہ ڈاکٹر محمود احمدي نژاد نے پچيسويں وحدت اسلامي کانفرنس کے افتتاحيہ کے پروگرام ميں جو اج صبح ھوٹل پارسيان تھران کے کانفرنس حال ميں منعقد ہوا دنيا کي موجودہ صورت حال پر سرسري نگاہ ڈالتے ہوئے کہا : تاريخ بشريت ظلم وفساد سے پٹي پڑي ہے اور انسانوں کے حق ميں ملائکہ کي گفتگو کہ خون ريزي وفساد برپا کريں گے محقق ہوچکي ہے ?

انہوں نے مزيد کہا : اس وقت دنيا ميں 7 بلين انسان موجود ہيں جن ميں سے 3 بلين لوگ بھوکھے ہيں اورايک بلين سے بھي زيادہ لوگوں کے پاس ايک ٹائم سے زيادہ کھانے کو نہي ہے ، سلامتي خطرے ميں ہے ، پاکيزہ زندگي موجود نہي ، عدالت کا رواج نہي ، ظلم وستم دنيا ميں پھيل چکا ہے ، افريقا جہاں خدا کي دي ہوئي نعمتيں فراوان موجود ہيں وہاں کے لوگ کاسہ گدائي لئے ہوئے گھوم رہے ہيں اور امريکن و يوروپين کمپنياں ان کي کانوں پر قبضہ جمائے ہوئے ہيں ?

احمدي نژاد نے مزيد کہا : ھرگز اج کي طرح کبھي بھي امريت اور وقت کے فرعونوں نے انسانيت کي اھانت نہي کي ، امريکا کي پشت پہ موجود صھيونيت اس بات کو مکمل طور سے سمجھ چکي ہے کہ غلامي اور سامراجيت ان کے مفاد کي تکميل نہي کرسکتے اسي بنياد پر وہ ظاھري جمھوريت کہ جس کا باطن انسان کشي اور سامراجيت ہے کي جانب تمايل ديکھا رہے ہيں ?

اسلامي جمھوريہ ايران کے صدر نے مزيد کہا : امريکن ڈالرعالمي پيسہ کے عنوان سے انسانوں پر تھوپ ديا گيا مگرھرگز اس پر عالمي نظارت نہي رکھي گئي تاکہ اپنے بجٹ کا خسارہ ڈالر اور قوموں کے جيب سے فراھم کرسکيں ، دنيا ميں امريکا کي موجودہ غارت گري تاريخ بشريت ميں بے سابقہ ہے ?

انہوں نے مغربي دنيا ميں حقيقي جھموريت کے فقدان کي جانب اشارہ کرتے ہوئے کہا : حقيقي جمھوريت موجودہ دنيا ميں ديکھنے کو نہي ملتي ، مغربي جمھوريت دھوکھ بازي اور فريب کے سوا کچھ بھي نہي ، امريکا کا اليکشن فقط دو پارٹيوں کي شرکت اور 50 پرسنٹ سے بھي کم لوگوں کے ووٹ سے ہوتا ہے ، لوگوں کو اختيار نہي کہ وہ ان دو پارٹيوں سے الگ کسي تيسري فرد کا انتخاب کرسکيں ، در حقيقت مغربي دنيا ميں جھموريت کو ظاھري طور سے بھي عملي جامہ نہي پہنايا جاتا ?

ڈاکٹر احمدي نژاد نے موجودہ دنيا کے لوگوں کي امريکا سے بڑھتي ہوئي ناراضگي کي جانب اشاري کرتے ہوئے کہا : امريکن صدر جمھوريہ خائن اور جنايت کار ہے مگر اس سر زمين کے لوگوں کے پاس دوسري فرد کے انتخاب کرنے کا اختيار بھي نہي کيونکہ وہ دوسرا بھي غارت گر ہے ?

ايراني صدر جمھوريہ نے مغربي جمھوريت کو انسانوں کے لئے تحقير بتاتے ہوئے کہا : يوروپين عوام سرديوں اور گرميوں ميں سڑکوں پر نکل پڑتے ہيں اور ملک کي موجودہ صورت حال کا گلہ کرتے ہيں ? موجودہ مغربي جمھوريت لوگوں کي توھين ہے کيوں کہ جمھوريت عوام کے نام پر ہے اور اس کا فائدہ صھيونيوں کو پہونچ رہا ہے ?

انہوں نے يوروپين ممالک کو خود کو صھيونيت کے حوالے کئے جانے پر تنقيد کا نشانہ بنا تے ہوئے کہا : تمام يوروپين ممالک صھيونيوں کو لگان ديتے ہيں ، يوروپين عوام خود اقتصادي مشکلات سے روبرو ہونے کے باوجود ان کا ٹيکس صھيونيت کے حوالے کيا جا رہا ہے ، اج کي دھوکھہ دھڑي مرموز ترين دھوکھہ دھڑي ہے ?

ڈاکٹراحمدي نژاد نے ياد دہاني کي : امريکن گورمنٹ نے دنيا پہ صھيونيت کا قبضہ جمانے کے لئے پچلھے دس سالوں ميں 10 لاکھ سے بھي زيادہ لوگوں کو علاقے ميں موت کے گھاٹ اتارا ، غاصب صھيونيت انسانيت کے لئے ايک دوسري حقارت شمار کي جاتي ہے ،غاصب صھيونيت فقط مسلمانوں اور مشرق وسطي ہے پر لادي نہي گئي بلکہ تمام انسانيت کا بوجھ بنادي گئي اور اسے دنيا کا حکمراں بنانا چاھتے ہيں ?

ايراني صدر جمھوريہ نے مزيد کہا : غاصب صھيونيت کے مخالف لوگوں کو ناممکن ہے کہ امريکا کا دوست اور ھم پيمان مانا جائے اوراس قانون ميں مسلم وغير مسلم کے درميان کوئي فرق نہي ، تاريخ کي بدترين فرد کو اسلحہ وطاقت اور قتل عام کے ذريعہ دنيا پر مسلط کرديا گيا ہے ، ان کي زبان ميں حضرت عيسي مسيح (ع) کي توھين جائز ہے مگر اسرائيل کي توھين کا کسي کو بھي حق نہي کہ يہ خود انسانيت کي توھين ہے ?

انہوں نے ايٹمي بم بنائے جانے کے سلسلے ميں امريکا کے بجٹ کي جانب اشارہ کرتے ہوئے کہا : امريکا 80 بلين ڈالر سے بھي زيادہ کا بجٹ ايٹمي بم بنانے ميں صرف کرتا ہے اوريہ بم دنيا کي سلامتي کے لئے نہي بنتے بلکہ بے گناہوں کے قتل عام اور ناحق جنگ کے استعمال کے لئے بنائے جاتے ہيں ?
تبصرہ بھیجیں
نام:
ایمیل:
* ‫نظریہ‬:
‫برای‬ مہربانی اپنے تبصرے میں اردو میں لکھیں.
‫‫قوانین‬ ‫ملک‬ ‫و‬ ‫مذھب‬ ‫کے‬ ‫خالف‬ ‫اور‬ ‫قوم‬ ‫و‬ ‫اشخاص‬ ‫کی‬ ‫توہین‬ ‫پر‬ ‫مشتمل‬ ‫تبصرے‬ ‫نشر‬ ‫نہیں‬ ‫ہوں‬ ‫گے‬