12 June 2012 - 17:00
‫نیوز‬ ‫کوڈ‬: 4212
فونت
سني علماء کونسل اورشيعہ وقف بورڈ ؛
رسا نيوزايجنسي - سني علماء کونسل عراق اورشيعہ وقف بورڈ عراق نے کاظمين عرا ق ميں زائرين امام موسي کاظم عليہ السلام پردھشت گرادنہ حملہ کي شديد مذمت کي ?
کاظمين

رسا نيوزايجنسي کے رپورٹر کي رپورٹ کے مطابق ، سني علماء کونسل عراق کے سربراہ شيخ خالد عبدالوهاب الملا نے اپنے ايک پيغام ميں زائرين امام موسي کاظم عليہ السلام پرہوئے دھشت گرادنہ حملہ کي شديد الفاظ ميں مذمت کي ?

اس پيغام ميں ايا : شھر کاظمين کا دھشت گرادانہ حملہ ، جو دسيوں زائرين کي شھادت اور ان کے زخمي ہونے کا سبب بنا ، کي شديد مذمت کي جاتي ہے اور اس لحاظ سے کہ اس حملہ کي ذمہ داري القاعدہ نے لي ہے ھم عراقيوں کو مزيد اس طرح کے دھشت گردانہ حملے سے اجتناب کرنے کي تاکيد کرتے ہيں ?

سني علماء کونسل کے سربراہ نے مزيد کہا : ھمارا تمام عراقيوں سے مطالبہ ہے کہ وہ تمام دھشت گردانہ حملے کا مقابلہ کريں ونيز پوري انتظاميہ کو مسجدوں ، امام بارگاہوں اور مقدس مقامات کي حافظت کي دعوت ديتا ہوں ?

اس کونسل نے سياسي پارٹيوں کو عدليہ کے معاملات ميں دخالت کرنے سے پرھيز کرنے کي درخواست کرتے ہوئے کہا : سياسي افراد عدليہ کي امور ميں مداخلت نہ کريں اور عدليہ کو مجرموں کے محاکمہ کا موقع ديں ، عدليہ کے استقلال کي حمايت سبھي کي ذمہ داري ہے ، تمام سياسي افراد اورعوام سوء استفادہ کرنے والوں کے ساتھ سخت رويہ رکھيں ?

شيعہ وقف بورڈ نے بھي اپنے پيغام ميں گذشتہ دن کاظمين عراق ميں زائرين امام موسي کاظم پرہوئے دھشت گرادنہ حملہ کي مذمت کرتے ہوئے ملي اتحاد کے خاتمہ اور مذھبي فتنہ پروري کے سلسلے ميں انجام شدہ اس طرح کي تمام کوششوں کو بے سود بيان کيا ?

قابل ذکر ہے کہ گزشتہ روز زائرين امام موسي کاظم (ع) کو عراق کے مقدس شھر کاظمين ميں راکٹ کا نشانہ بنايا گيا جس ميں 5 افراد جاں بحق اور21 ادمي زخمي ہوگئے ?


تبصرہ بھیجیں
نام:
ایمیل:
* ‫نظریہ‬:
‫برای‬ مہربانی اپنے تبصرے میں اردو میں لکھیں.
‫‫قوانین‬ ‫ملک‬ ‫و‬ ‫مذھب‬ ‫کے‬ ‫خالف‬ ‫اور‬ ‫قوم‬ ‫و‬ ‫اشخاص‬ ‫کی‬ ‫توہین‬ ‫پر‬ ‫مشتمل‬ ‫تبصرے‬ ‫نشر‬ ‫نہیں‬ ‫ہوں‬ ‫گے‬