11 July 2012 - 16:21
‫نیوز‬ ‫کوڈ‬: 4333
فونت
ڈاکٹراحمدي نژاد :
رسا نيوزايجنسي – ايراني صدر جمھوريہ ڈاکٹرمحمود احمدي نژاد نے خواتين اور اسلامي بيداري عالمي کانفرنس ميں عالمي سامراجيت کے اج کے مظالم کو تاريخ بشريت ميں بے مثال اور اقوام متحدہ کو اپنے دائرے سے باہر جانا ?
ڈاکٹراحمدي نژاد

رسا نيوزايجنسي کے رپورٹر کي رپورٹ کے مطابق ، ايراني صدر جمھوريہ ڈاکٹرمحمود احمدي نژاد نے خواتين اور اسلامي بيداري عالمي کانفرنس ميں جو کل ميلاد ٹاور تہران ميں منعقد ہوئي سماجي تبديليوں ميں خواتين کے کردارکي جانب اشارہ کرتے ہوئے کہا : ھم معتقد ہيں کہ سماجي تبديليوں ميں خواتين کا کرداد مردوں سے زيادہ اھم ، موثر اورديرپا ہے ?

ايراني صدر جمھوريہ نے مزيد کہا : محال ہے اگر عورت سماجي اور ثقافتي تبديليوں کا ارادہ کر لے اور انجام نہ پائے ، جس معاشرے کي عورت بيدار ہوگئي اس معاشرے کے لوگ بھي بيدار ہوئے ہيں ?

انہوں نے خواتين کي خصوصيتوں کي جانب اشارہ کرتے ہوئے کہا : ھمارا ايمان ہے کہ خدا وند متعال نے عورتوں کو کچھ خصوصيتيں عطا کيں ہيں اور اسي بنياد پر ان کے دوش پر کچھ ذمہدارياں بھي سونپي ہيں ?

ڈاکٹرمحمود احمدي نژاد نے انسان کے الھي مقام کي جانب کي اشارہ کرتے ہوئے تاکيد کي : خداوند متعال نے انسانوں کو ابرومند اور معنويت سے بھري زندگي کے لئے خلق کيا ہے ، اُس نے اِنہيں حقارت اميز اوراندھيروں سے بھري حيات کےلئے خلق نہيں کيا ، انسان ائينہ جلال و جمال الھي ہے اور انسان زمين پر خدا کا نمائندہ بننے کي صلاحيتں رکھتا ہے ?

انہوں نے يہ کہتے ہوئے کہ انبياء الھي انسان کي حقيقت اور عزت کے احياء کے لئے ائے تاکيد کي : دنيا کے کس کونے ميں انسان عزت دار ہے اور انساني حقيقت کا مزہ چکھ رہا ہے ، 3 ارب سے زيادہ لوگ بھوکے اور اپني حيات کے لوازمات پورے کرنے کي صلاحيتيں نہيں رکھتے ان حالات ميں کس طرح ابرومند حيات کا تجربہ کيا جاسکتا ہے ?

انہوں نے ڈيکٹيٹر نظام کو بدترين حاکم نظام بتاتے ہوئے کہا : ڈيکٹيٹر نظام حکومت ، انساني حکومت کا بدترين نظام حکومت ہے ، اس طرح کي حاکميت انسانيت کو کچلنے والي اور انساني صلاحيتوں کي قاتل ہے ?

انہوں نے يہ کہتے ہوئے کہ آج انسان اور حقيقت انسان پر ہونے والے مظالم کي تاريخ ميں مثال نہيں ملتي ہے اضافہ کيا : ہم سب کا فرض ہے کہ بشريت کي نجات اور دنيا ميں عدالت کي برقراري کے لئے مل جل کر کوشش کريں اور اس کے لئے ہميں سب سے پہلے عالمي سامراج امريکہ اورغاصب صھيويني اسرائيل کي حکمراني ختم کرني ہوگي ?



تبصرہ بھیجیں
نام:
ایمیل:
* ‫نظریہ‬:
‫برای‬ مہربانی اپنے تبصرے میں اردو میں لکھیں.
‫‫قوانین‬ ‫ملک‬ ‫و‬ ‫مذھب‬ ‫کے‬ ‫خالف‬ ‫اور‬ ‫قوم‬ ‫و‬ ‫اشخاص‬ ‫کی‬ ‫توہین‬ ‫پر‬ ‫مشتمل‬ ‫تبصرے‬ ‫نشر‬ ‫نہیں‬ ‫ہوں‬ ‫گے‬