07 January 2013 - 13:43
‫نیوز‬ ‫کوڈ‬: 4973
فونت
رسا نيوزايجنسي - جماعت اسلامي پاکستان کے سابق امير قاضي حسين احمد نے دار فاني کو الوداع کہا ?
قاضي حسين احمد
 
رسا نيوزايجنسي کي رپورٹ کے مطابق، جماعت اسلامي پاکستان کے سابق امير قاضي حسين احمد اج صبح دل کا دورہ پڑ جانے کے سبب دار فاني کو الوداع کہ گئے ?

قاضي حسين احمد کو کل رات گئے دل کا دورہ پڑنے کے سبب فورا اسلام آباد کے نجي اسپتال ميں منتقل کيا گيا ليکن ڈاکٹروں کے بيان مطابق ان کا پہلے ہي انتقال ہوچکا تھا?

ذرائع کے مطابق گزشتہ دو ہفتے سے ان کي طبعيت ناساز تھي ، تين روز قبل قاضي حسين احمد کو اسلام آباد کے علاقے ايف ٹين ميں واقع نجي اسپتال ميں منتقل کياگيا تھا مگر گذشتہ رات ان کي طبعيت اچانک خراب ہوگئي اور وہ جانبر نہ ہوسکے ، قاضي حسين احمد کے دو بائي پاس بھي ہوچکے تھے?

جماعت اسلامي کے سابق امير کي نماز جنازہ اميرجماعت اسلامي منورحسن کي اقتداء ميں اج پشاور رنگ روڈ پر ادا کي گئي جس ميں جماعت اسلامي کے مرکزي رہنماؤں سميت سياسي ، سول سوسائٹي اور سرکاري افسران بھي شامل تھے نيز قاضي حسين احمد کي غائبانہ نمازجنازہ بھي کراچي اور لاہور سميت ملک کے مختلف شہروں ميں ادا کي گئي جس ميں کثير تعداد ميں سياسي ، سماجي و مذھبي شخصيتوں نے شرکت کي ?

نماز جنازہ کے بعد انہيں اشک بار آنکھوں کے ساتھ نوشہرہ ميں سپرد خاک کرديا گيا ?

قاضي حسين احمد انيس سو اڑتيس ميں نوشہرہ کے گاؤں زيارت کاکا صاحب ميں پيدا ہوئے ان کے والد مولانا قاضي محمد عبدالرب ممتازعالم دين تھے ، انہوں نے ابتدائي تعليم گھر پروالدِ سے حاصل کي ، اسلاميہ کالج پشاور سے گريجويشن کے بعد پشاور يونيورسٹي سے جغرافيہ ميں ايم ايس سي کي ، جہانزيب کالج سيدو شريف ميں تين برس ليکچرار بھي رہے جس کے بعد پشاور ميں اپنا کاروبار شروع کرديا ، جہاں سرحد چيمبرآف کامرس اينڈ انڈسٹري کے نائب صدر منتخب ہوئے ، دوران تعليم اسلامي جمعيت طلبہ ميں شامل رہنے کے بعد قاضي حسين احمد انيس سو ستر ميں جماعت اسلامي کے رکن بنے ، انيس سو اٹھتر ميں جنرل سکريٹري اور انيس سو ستاسي ميں جماعت اسلامي پاکستان کے امير منتخب کر لئے گئے?

وہ انيس سو پچاسي اور انيس سوبانوے ميں دو مرتبہ پاکستان کے سينيٹرمنتخب ہوئے، دوہزار دو کے انتخابات ميں قاضي حسين احمد قومي اسمبلي کے رکن بھي منتخب ہوئے ، مذہبي جماعتوں کے اتحاد متحدہ مجلس عمل کے صدر بھي منتخب کئےگئے ، وہ بائيس برس تک جماعت اسلامي کے امير رہے اور دوہزار نو ميں امارت سے سبکدوش ہوئے ، انہيں اپني مادري زبان پشتو کے علاوہ اردو، انگريزي، عربي اور فارسي پر عبور حاصل تھا ?

قاضي حسين احمد کے انتقال پر پاکستان کے صدر، وزيراعظم ، شيعہ علما کونسل پاکستان کے سربراہ حجت الاسلام سيد ساجد علي نقوي ، ايم ڈبليو ايم پاکستان کے جنرل سکريٹري حجت الاسلام ناصر عباس جعفري، مجلس وحدت مسلمين خيبر پختونخوا کے جنرل سکريٹري سبيل حسن مظاہري ، شيعہ علما کونسل پاکستان کے سرگرم رکن حجت الاسلام عارف واحدي ، وفاق المدارس شيعہ پاکستان کے صدر حافظ سيد رياض حسين نجفي سميت پاکستان کي سياسي، مذہبي شخصيتوں نے تعزيت پش کرتے ہوئے ان کے اھل خانہ سے ھمدردي کا اظھار کيا ?






تبصرہ بھیجیں
نام:
ایمیل:
* ‫نظریہ‬:
‫برای‬ مہربانی اپنے تبصرے میں اردو میں لکھیں.
‫‫قوانین‬ ‫ملک‬ ‫و‬ ‫مذھب‬ ‫کے‬ ‫خالف‬ ‫اور‬ ‫قوم‬ ‫و‬ ‫اشخاص‬ ‫کی‬ ‫توہین‬ ‫پر‬ ‫مشتمل‬ ‫تبصرے‬ ‫نشر‬ ‫نہیں‬ ‫ہوں‬ ‫گے‬