28 October 2013 - 14:00
‫نیوز‬ ‫کوڈ‬: 6076
فونت
شیعہ علماء کونسل پاکستان کے صدر:
رسا نیوز ایجنسی – سرزمین پاکستان کے نامور شیعہ دینی راہنما حجت الاسلام سید ساجد علی نقوی نے اس بات پر زور دیتے ہوئے کہ دہشت گردی روکنے کیلئے سنجیدہ اقدامات نہ اٹھائے گئے تو ہم قومی دفاعی پالیسی اختیار کریں گے شیعہ جوانوں سے خطاب میں کہا: شیعہ حقوق کی بقا میں نوجوان اپنا کردار ادا کریں ۔
سيد ساجد نقوي


رسا نیوز ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق، جعفریہ یوتھ پاکستان کی سنٹرل ایگزیکٹو کمیٹی کا اہم اجلاس، اسلامی تحریک پاکستان  کے سربراہ حجت الاسلام سید ساجد علی نقوی کی صدارت میں راولپنڈی میں منعقد ہوا۔


اجلاس میں جعفریہ یوتھ کے صوبائی ناظمین اور معاونین کے علاوہ مرکزی ناظم اعلیٰ اظہار بخاری اور معاونین نے خصوصی شرکت کی۔


قائد ملت جعفریہ پاکستان نے اس اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کہا : ملک کے حالات متقاضی ہیں کہ ہم تشیع کے حقوق کیلئے متحد ہو کر جدوجہد کریں ۔


انہوں نے یہ کہتے ہوئے کہ کسی بھی قوم کی ترقی اور شعوری ارتقاء میں نوجوانوں کا کلیدی کردار ہوتا ہے کہا: عصر حاضر کا تقاضا ہے کہ آج کا نوجوان حقیقی اسلامی معارف کو معاشرے میں روشاس کرانے کیلئے خود کو شعور و کردار کے ہتھیار سے لیس کریں ۔


شیعہ علماء کونسل پاکستان کے صدر نے جعفریہ یوتھ پاکستان کی مجموعی تنظیمی کارکردگی پر اطمینان کا اظہار کرتے ہوئے کہا : ملک بھر میں تشیع کے حقوق کے تحفظ اور قومی جماعت کی مضبوطی کیلئے جے وائی پی کو مزید بہتر انداز میں کام کرنے کی ضرورت ہے۔


انہوں نے ملک کے داخلی مسائل و حالات کا تذکرہ کرتے ہوئے کہا: ملک میں جنگل راج کا دور و دورہ اور ہم ایک عرصے سے یہ مطالبہ کر رہے ہیں کہ عوام کو اصل حقائق سے آگاہ کیا جائے اور قانون کی عمل داری کو یقینی بنایا جائے وگرنہ اس ملک کی سالمیت کو خطرات لاحق ہو سکتے ہیں اور اگر حکمرانوں اور ریاستی اداروں نے دہشت گردی روکنے کیلئے سنجیدہ اقدامات نہ اٹھائے تو پھر ہمیں اپنی ملی دفاعی پالیسی اختیار کرنے کا مکمل آئینی حق حاصل ہے۔
 

تبصرہ بھیجیں
نام:
ایمیل:
* ‫نظریہ‬:
‫برای‬ مہربانی اپنے تبصرے میں اردو میں لکھیں.
‫‫قوانین‬ ‫ملک‬ ‫و‬ ‫مذھب‬ ‫کے‬ ‫خالف‬ ‫اور‬ ‫قوم‬ ‫و‬ ‫اشخاص‬ ‫کی‬ ‫توہین‬ ‫پر‬ ‫مشتمل‬ ‫تبصرے‬ ‫نشر‬ ‫نہیں‬ ‫ہوں‬ ‫گے‬