07 December 2009 - 15:33
‫نیوز‬ ‫کوڈ‬: 651
فونت
رسا نيوزايجنسي - اسباب وعلل مھجوريت غدير کے عنوان سے کل مدرسہ حجتيہ قم ميں ايک سيمينار کا انعقاد کيا گيا.
اسباب وعلل مھجوريت غدير کے عنوان سے سيمينار منعقد ہوا

 

رسا نيوزايجنسي کے رپورٹر کي رپورٹ کے مطابق، اسباب وعلل مھجوريت غدير کے عنوان سے غدير مشن شعبہ قم  ايران کي جانب سے کل مدرسہ حجتيہ قم ميں ايک سيمينار کا انعقاد.

 

اس سيمينار ميں حضرت حجت السلام والمسلمين محمد حسين اعتماد نےاسباب وعلل مھجوريت غدير پر روشني ڈالتے ہوئے کہا : قران کريم اوراحاديث مرسل اعظم (ص) ميں لفظ مولي،  اولي بالتصرف کے معني ميں استعمال کيا گيا ہے .

 

جناب اعتمادنے کہا : پيغمبر(ص) کے حکم کي اطاعت سبھي پر لازم و ضروري ہے لھذا قران کريم نےکہا ہے کہ النبي واولي بکم .

 

اپ نے مزيد کہا : احمد ابن حمبل نے رسول اسلام کے غدير خم ميں کہے ہوئے اس جملے وال من والاہ و عاد من اعداہ کے ذيل ميں کہا کہ يہاں پر کلمہ وال، اولي بالتصرف کے معني ميں ہے.


 
حوزہ علميہ کے اس استاد نے کہا : مرسل اعظم کے زمانے ميں موجود سارے صحابي اس بات کو مانتے تھے کہ مولي امير ، خيلفہ ، جانشين کے معني ميں ہے .

 

اس سمينار کے ديگر مقرر حجت السلام والمسلمين سيد رضاحيدر نے مھجوريت کے اسباب وعلل کے سلسلے ميں کہا: غدير کي مھجوريت کے اسباب ميں سے ايک سبب عدم فھم قران کريم ہےجيسا کہ قران نے کلمہ مولي کو جہاں جہاں بھي استعامل کيا ہے وہاں اولي بالتصرف کے معني ميں استعمال کيا ہے.

 

اپ نے اسلام کو دين صلح و برابري بيان کرتے ہوئےکہا:  اسلام کے نگاہ ميں رنگ و ذات ومال کي کوئي حيثيت نہي تھي اس بات کوکوئي ماننے کو تيار نہي تھا اسي بناء پرلوگوں نےغير کو ماننے سے انکار کرديا.

 

جناب رضا حيدراميرالمومنين کے عدل وانصاف کے سلسلے ميں اپکي ايک حديث کا حوالہ ديتےہوئے کہا   : مولاکائنات کہتے ہيں اگرھميں کو پوري دنيا دے دے اوراسکے عوض کے ميں يہ چاھے کہ ميں اس چيونٹي کے منھ سے دانا چھين لوں توھرگز ايسا ظلم نہي کروں گا .

 

اپ نے کہا : جو لوگ غير ميں تھے يہ جاننے تھے کہ اگرعلي (ع) خليفہ ہوگئے ذات پات کا فرق مٹ جائے گا اورفقط تقوي معيار ہوگا.

 

اپ نے اخر ميں اپني گفتگو ميں دنيا کے حالت پر نگاہ ڈالتے ہوئے کہا : اپ کو مولي نہ ماننے کا نتيجہ يہ ہوا کہ اج کسي کے پاس اتنا مال ہے کہ اسے اپنے مال کي تہ معلوم نہي ہے اور اسي دنيا کے ايک دوسرے گوشے ميں کوئي بھوکھے مر راہاہے .
  

 

تبصرہ بھیجیں
نام:
ایمیل:
* ‫نظریہ‬:
‫برای‬ مہربانی اپنے تبصرے میں اردو میں لکھیں.
‫‫قوانین‬ ‫ملک‬ ‫و‬ ‫مذھب‬ ‫کے‬ ‫خالف‬ ‫اور‬ ‫قوم‬ ‫و‬ ‫اشخاص‬ ‫کی‬ ‫توہین‬ ‫پر‬ ‫مشتمل‬ ‫تبصرے‬ ‫نشر‬ ‫نہیں‬ ‫ہوں‬ ‫گے‬