02 September 2012 - 18:31
‫نیوز‬ ‫کوڈ‬: 4516
فونت
آيت الله طبرسي کے دفتر ميں:
رسا نيوزايجنسي - ايک عيسائي خاتون نے صوبہ مازنداران ميں رھبر معظم انقلاب کے نمائندہ آيت الله طبرسي کے دفتر ميں دين اسلام قبول کرليا ?
مسلمان خاتون

رسا نيوزايجنسي کے رپورٹر کي شھر ساري سے رپورٹ کے مطابق، ايک عيسائي خاتون نے صوبہ مازنداران ميں رھبر معظم انقلاب کے نمائندہ آيت الله طبرسي کے دفتر ميں حاضر ہوکر دين اسلام قبول کرليا ?

ارمينيا کے رھنے والي آي مسايمينز آرسمينگز نامي خاتون نے اج صوبہ مازنداران ميں رھبر معظم انقلاب کے نمائندہ آيت الله طبرسي کے دفتر ميں ا?کر دين اسلام اور مذھب شيعہ قبول کرکے دين اسلام اوربارہ اماموں کي ماننے والوں ميں ملحق ہوگئيں?

يہ خاتون نرس ہيں اور سوئڈ کے ايک ہاسپيٹل ميں ملازمت کرتي ہيں ?

انہوں نے دين اسلام کا کلمہ پڑھنے کے بعد آيت الله طبرسي سے کہا: ميں نے دين اسلام کے سلسلے ميں کافي تحقيقيں انجام دي ہيں اور اس کے بعد دين اسلام کو گلے سے لگايا ہے ?

انہوں نے دين اسلام کو انسانيت کا مکمل دين جانا اور کہا: دين اسلام انسانوں کے لئے مکمل اور بہترين دين ہے ?

انہوں نے يہ بيان کرتے ہوئے کہ ھميں فخر ہے کہ ھم نے دين اسلام کو اپنا دين قرار ديا کہا: ھمارے لئے نام فاطمہ کا انتخاب ميري ديرينہ تمنا تھي ?
تبصرہ بھیجیں
نام:
ایمیل:
* ‫نظریہ‬:
‫برای‬ مہربانی اپنے تبصرے میں اردو میں لکھیں.
‫‫قوانین‬ ‫ملک‬ ‫و‬ ‫مذھب‬ ‫کے‬ ‫خالف‬ ‫اور‬ ‫قوم‬ ‫و‬ ‫اشخاص‬ ‫کی‬ ‫توہین‬ ‫پر‬ ‫مشتمل‬ ‫تبصرے‬ ‫نشر‬ ‫نہیں‬ ‫ہوں‬ ‫گے‬