20 May 2014 - 15:37
‫نیوز‬ ‫کوڈ‬: 6801
فونت
عبید اللہ خان آعظمی:
رسا نیوز ایجنسی - ہندوستان کے معروف سنی عالم دین نے میں صحابی رسول اویس قرنی کی قبر مسمار کئے جانے پر سخت رد عمل کا اظھار کرتے ہوئے کہا: عالمی سامراجیت اور سعودی تکفیری اسلام کیخلاف سرگرم عمل ہیں ۔
عبيد اللہ خان آعظمي

 

رسا نیوز ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق ، ہندوستان کے معروف سنی عالم دین اور سابق پارلیمنٹ رکن عبید اللہ خان آعظمی نے سعودی تکفیری کے ہاتھوں صحابی رسول اویس قرنی کی قبر مسمار کئے جانے پر سخت رد عمل کا اظھار کیا ۔


انہوں ںے یہ کہتے ہوئے کہ امریکہ ، برطانیہ اور یہودی لابی شام میں تکفیریوں کے ہاتھوں مقدس مزارات شہید کر کے مسلمانوں میں اختلافات پیدا کرنے کی کوشش کررہی ہے کہا: تکفیری عناصر اور ان کے حامی ممالک، خاص طور سے سعودی عرب، اسلامی شعائر کے خلاف سرگرم عمل ہے تاکہ وہ وہابیت کو فروغ دے سکیں ۔


عبید اللہ خان آعظمی نے اس قسم کی سازشوں کے جواب میں مسلمانوں کی جانب سے ہوشیاری کا مظاہرہ کئے جانے کی ضرورت پر زور دیتے ہوئے کہا: یہودیوں اور سعودی عرب کی سازشیں کامیاب نہ ہوسکیں گی ۔


انہوں نے مزید کہا: تکفیریوں اور وہابیوں کے ہاتھوں، مزارات کی مسماری کا سلسلہ جنت البقیع سے شروع ہوا ہے جو آج بھی جاری ہے۔
 

تبصرہ بھیجیں
نام:
ایمیل:
* ‫نظریہ‬:
‫برای‬ مہربانی اپنے تبصرے میں اردو میں لکھیں.
‫‫قوانین‬ ‫ملک‬ ‫و‬ ‫مذھب‬ ‫کے‬ ‫خالف‬ ‫اور‬ ‫قوم‬ ‫و‬ ‫اشخاص‬ ‫کی‬ ‫توہین‬ ‫پر‬ ‫مشتمل‬ ‫تبصرے‬ ‫نشر‬ ‫نہیں‬ ‫ہوں‬ ‫گے‬