19 October 2014 - 17:07
‫نیوز‬ ‫کوڈ‬: 7380
فونت
حجت الاسلام امین شہیدی :
رسا نیوز ایجنسی ـ مجلس وحدت مسلمین پاکستان کے مرکزی ڈپٹی سیکرٹری نے کہا : جس طرح ہم مکتب تشیع کی حفاظت کیلئے میدان میں حاضر ہیں اسی طرح ہم اپنے اہلسنت برادران کی حفاظت کیلئے بھی ڈٹے ہوئے ہیں۔
حجت الاسلام امين شہيدي


رسا نیوز ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق مجلس وحدت مسلمین پاکستان کے مرکزی ڈپٹی سیکرٹری جنرل حجت الاسلام محمد امین شہیدی نے امروہہ گراونڈ انچولی سوسائٹی میں ایم ڈبلیو ایم کراچی ڈویژن کے زیر انتظام شہدائے راہ ولایت کانفرنس سے خطاب کرتے کہا : الٰہی اہداف کے تحت شہداء نے آگاہانہ طور پر اپنا پاکیزہ لہو راہ خدا میں دیکر ہمیں سر اٹھا کر جینے اور شعوری زندگی کے انتخاب کا موقع دیا ہے ۔

انہوں نے وضاحت کی : طالبان، القاعدہ و داعش کے ذریعے امریکا، اسرائیل، سعودی عرب نے فرقہ واریت پھیلا کر عالم اسلام میں سنی شیعہ وحدت کو نقصان پہنچانے کی ناپاک کوشش کیں، یہ اتحاد عالمی استعمار امریکا و اسرائیل اور انکے نمک خوار سعودی عرب کے سینے میں خنجر کی مانند ہے ۔

مجلس وحدت مسلمین پاکستان کے مرکزی ڈپٹی سیکرٹری نے کہا : ماہ محرم، صفر اور ربیع الاول آنے والے ہیں، لہٰذا اہلسنت و اہل تشیع کو پہلے سے زیادہ بیدار رہنے کی ضرورت ہے، فرقہ واریت پھیلانے کی سازشیں عروج پر ہیں، شام اور عراق سے تکفیری دہشتگردوں کا ایک بڑا ٹولہ واپس پاکستان بھیجا جا چکا ہے تک کہ محرم، صفر اور ربیع الاول کے مبارک مہینوں کو خراب کیا جاسکے، خاص طور پر مکتب تشیع کے جوانوں کو منظم اور جامع حکمت عملی اور منصوبہ بندی ترتیب دینی ہوگی تا کہ اہل تشیع کے ساتھ اپنے اہلسنت برادران کا تحفظ بھی یقینی بنایا جاسکے اور شیعہ سنی اتحاد و وحدت کی فضاء کو بھی نقصان سے محفوظ رکھا جاسکے۔

حجت الاسلام امین شہیدی نے تاکید کی : آج شہداء کی قربانیوں کا نتیجہ ہے کہ ہر گلی کوچے میں نوجوان باطل کے سامنے ڈٹا ہوا ہے، شہادت کو گلے لگا لیں گے لیکن باطل کے ڈر سے میدان نہیں چھوڑیں گے، تعلیماتِ محمد و آل محمد پر عمل پیرا شہداء کی قربانیوں کی وجہ سے اسلام زندہ ہے، ضروری ہے کہ ہر ہر گھر اور معاشرے کو شہید پرور بنایا جائے۔

انہوں نے کہا : امریکا، اسرائیل اور سعودی عرب نے داعش کو پیدا کیا، پروان چڑھایا، اور اب انکی سرکوبی کے بہانے خطے میں صہیونیت مخالف حقیقی اسلامی مزاحمتی تحریکوں اور اسلامی بیداری کی لہر کو ختم کرنے کی کوشش کر رہے ہیں ۔ حجت امین شہیدی نے کہا : پاکستان میں امریکی سعودی برانڈ اسلام کے پروردہ تکفیری دہشتگرد عناصر کے ذریعے عزاداری و میلاد منانے والے محب وطن سنی شیعہ مسلمانوں کو مسلسل دہشتگردی کا نشانہ بنایا جا رہا ہے۔

انہوں نے وضاحت کی : وطن عزیز پاکستان میں ہونے والی تمام تر دہشتگردی میں تکفیری ٹولہ ملوث ہے، جس نے اہلسنت کا نام چرایا لیکن خراج تحسین کے مستحق ہیں ہمارے اہلسنت علمائے کرام اور عوام جنہوں نے تکفیری دہشتگرد ٹولے کو اہلسنت سے خارج قرار دیکر تکفیریت پھیلانے کی سازش کو ناکام بنا دیا۔

مجلس وحدت مسلمین پاکستان کے مرکزی ڈپٹی سیکرٹری نے کہا : حسینیت اور رسالت کو کوئی مائی کا لعل جدا نہیں کرسکتا، اہلسنت و اہل تشیع مسلمان ان دہشتگرد تکفیری سازشی عناصر کے ہاتھ کاٹ دینگے، جس طرح ہم مکتب تشیع کی حفاظت کیلئے میدان میں حاضر ہیں اسی طرح ہم اپنے اہلسنت برادران کی حفاظت کیلئے بھی ڈٹے ہوئے ہیں۔

حجت الاسلام امین شہیدی نے کہا : نواز شریف کرپشن کا امام بنا ہوا ہے، اسی "گو نواز گو" کے نعرے زبان زد عام ہوچکے ہیں، ورنہ نواز شریف سے کسی کو بھی کوئی ذاتی عداوت نہیں ہے، نواز حکومت کی پالیسیوں کی وجہ سے تکفیری دہشتگردوں کو تقویت ملی ہے اور محب وطن مکتب تشیع کو امن پسندی کے نتیجے میں کمزور کیا گیا ہے، نواز شریف اور اس کی لیگی حکومت نے اپنی تمام تر پالیسیاں امریکا، اسرائیل اور خصوصاً سعودی عرب کے مفادات کو سامنے رکھ کر ترتیب دیں، نہ کہ پاکستان کے مفادات کو سامنے رکھ کر، کیونکہ نواز حکومت کو پاکستان کے نہیں بلکہ امریکی، اسرائیلی و سعودی مفادات عزیز ہیں۔

انہوں نے کہا : سنی شیعہ اتحاد و وحدت کے چراغ کو ہم نے سورج بنانا ہے، اس اتحاد کے پیغام کو گھر گھر پہنچانا ہے، اہلسنت کے شہداء بھی ہمارے شہداء ہیں، ہم انکے تمام دکھ درد میں انکے ساتھ کھڑے ہیں، انشاءاللہ وہ وقت دور نہیں کہ جب تکفیری دہشتگرد عناصر مزید تنہائی کا شکار ہو کر نابود ہوجائیں گے۔
 

تبصرہ بھیجیں
نام:
ایمیل:
* ‫نظریہ‬:
‫برای‬ مہربانی اپنے تبصرے میں اردو میں لکھیں.
‫‫قوانین‬ ‫ملک‬ ‫و‬ ‫مذھب‬ ‫کے‬ ‫خالف‬ ‫اور‬ ‫قوم‬ ‫و‬ ‫اشخاص‬ ‫کی‬ ‫توہین‬ ‫پر‬ ‫مشتمل‬ ‫تبصرے‬ ‫نشر‬ ‫نہیں‬ ‫ہوں‬ ‫گے‬