03 April 2015 - 23:28
‫نیوز‬ ‫کوڈ‬: 7991
فونت
جعفریہ سٹوڈنٹس آرگنائزیشن پاکستان :
رسا نیوز ایجنسی ـ جعفریہ سٹوڈنٹس آرگنائزیشن پاکستان کی مرکزی مجلس نظارت کا اجلاس جامعہ المنتظر لاہور میں منعقد ہوا۔
جعفريہ اسٹوڈنٹس آرگنائزيشن پاکستان


رسا نیوز ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق جعفریہ سٹوڈنٹس آرگنائزیشن پاکستان کی مرکزی مجلس نظارت کا اجلاس جامعہ المنتظر لاہور میں منعقد ہوا۔

اجلاس کی صدارت کرتے ہوئے قائد ملت جعفریہ پاکستان حجت الاسلام سیّد ساجد علی نقوی نے فرمایا کے جعفریہ سٹوڈنٹس آرگنائزیشن کے جوانوں کو تعلیمی میدان میں نمایاں نظر آنا چاہیے۔

مرکزی مجلس نظارت کے اجلاس میں جعفریہ سٹوڈنٹس آرگنائزیشن کے مرکزی صدر وفا عباس نے اپنی کارکردگی رپورٹ پیش کی جسے نظارت کے اراکین نے سراہا اور مزید بہتر بنانے پر زور دیا۔

مرکزی مجلس نظارت کے اجلاس میں مرکزی مجلس عمومی منعقدہ فیصل آباد کی منظور شدہ دستوری ترامیم کا جائزہ لیا گیا اور ماسوائے 1 سال تنظیمی دورانیہ کے باقی تمام ترامیم کثرت رائے سے منظور ہوئیں۔

اس اجلاس میں 1 سالہ تنظیمی مدت کی منظوری نہ ہو سکی اور تنظیمی مدت 2 سال ہی برقرار رکھی گئی۔ 2 سالہ پروگرام کی منظوری بعض ترامیم کے بعد دی گئی۔ دورئہ زیارات و مقامات مقدسہ کی منظوری دی گئی اور بیرون ملک تنظیم سازی کی بھی منظوری دی گئی۔

جعفریہ سٹوڈنٹس آرگنائزیشن کی بہتری، فعالیت اور مضبوطی کے لیے تمام اراکین نظارت نے اپنی اپنی آراء پیش کیں اور تعلیمی اداروں میں جعفریہ سٹوڈنٹس آرگنائزیشن کو مزید مضبوط کرنے کے لیے مزید اقدامات کا جائزہ لیا گیا۔

مرکزی مجلس نظارت کے اجلاس میں گلگت بلتستان سے لے کر بشمول زاد کشمیر کراچی تک کے اراکین نے بھرپور شرکت کی۔

گلگت سے حجت الاسلام شیخ مرزا علی، آزاد کشمیر سے حجت الاسلام صادق نقوی کے علاوہ مرکزی جنرل سیکرٹری شیعہ علماء کونسل حجت الاسلام عارف حسین واحدی، حجت الاسلام سیّد محمد تقی نقوی، حجت الاسلام محمد افضل حیدری، حجت الاسلام شبیر حسن میثمی، حجت الاسلام محمد رمضان توقیر، حجت الاسلام ناظر عباس تقوی، حجت الاسلام مظہر عباس علوی، حجت الاسلام احسان علی اتحادی، پروفیسر خادم لغاری، برادر حسین عباس جعفری، برادر دوست علی ونگانی، سیّد افتخار نقوی، برادر منور عباس ساجدی، برادر حسنین جاوید اور مرکزی صدر وفا عباس نے شرکت کی۔
 

تبصرہ بھیجیں
نام:
ایمیل:
* ‫نظریہ‬:
‫برای‬ مہربانی اپنے تبصرے میں اردو میں لکھیں.
‫‫قوانین‬ ‫ملک‬ ‫و‬ ‫مذھب‬ ‫کے‬ ‫خالف‬ ‫اور‬ ‫قوم‬ ‫و‬ ‫اشخاص‬ ‫کی‬ ‫توہین‬ ‫پر‬ ‫مشتمل‬ ‫تبصرے‬ ‫نشر‬ ‫نہیں‬ ‫ہوں‬ ‫گے‬