05 November 2015 - 20:54
‫نیوز‬ ‫کوڈ‬: 8657
فونت
حجت الاسلام شہنشاہ حسین نقوی :
رسا نیوز ایجنسی ـ پاکستان کے مشہور عالم دین و شیعہ علما کونسل پاکستان کے مرکزی رہنما نے کہا : حکومت اور ریاستی اداروں کو چاہیئے کہ وہ ملک کو غیر مستحکم کرنے والے عناصر کے گرد گھیرا تنگ کریں اور ہمارے علماء، خطباء اور ذاکرین کو چاہیئے کہ وہ امن و محبت کا پیغام عام کریں۔
حجت الاسلام شہنشاہ حسين نقوي


رسا نیوز ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق پاکستان کے مشہور عالم دین و شیعہ علما کونسل پاکستان کے مرکزی رہنما حجت الاسلام شہنشاہ حسین نقوی نے قرآن کریم کی آیت واعتصمو بحبل اللہ ۔۔۔ کی طرف اشارہ کرتے ہوئے اپنی ایک تقریر میں کہا : اسلام امن و اتحاد، وحدت اور یکجہتی کا درس دیتا ہے اور یہ بات واضح طور پر کہی گئی ہے کہ خدا کی رسی کو مضبوطی سے تھام لو اور تفرقوں سے بچ کر رہو۔

انہوں نے وضاحت کرتے ہوئے بیان کیا : لیکن آج مسلمان تقسیم در تقسیم ہوتے چلے جا رہے ہیں، جس کی وجہ سے ہم پست سے پستی کی طرف بڑھتے جا رہے ہیں، ضرورت اس بات کی ہے کہ ہم یکجا ہوں اور فتنہ و فساد سے دور رہا جائے اور جو لوگ شرپسندی اور انتشار کی بات کرتے ہیں، ان کا اسلام سے کوئی تعلق نہیں۔

شہنشاہ حسین نقوی نے دہشت گردوں کا مذہب سے کسی طرح کا تعلق نہ ہونے کی طرف اشارہ کرتے ہوئے کہا : ملک میں شیعہ و سنی کا کوئی جھگڑا نہیں ہے بلکہ ایک مخصوص ٹولہ یہاں کے حالات خراب کر رہا ہے اور عوام کی جان و مال کو انہی دہشت گردوں سے خطرہ ہے۔

انہوں نے تاکید کرتے ہوئے بیان کیا : حکومت اور ریاستی اداروں کو چاہیئے کہ وہ ملک کو غیر مستحکم کرنے والے عناصر کے گرد گھیرا تنگ کریں اور ہمارے علماء، خطباء اور ذاکرین کو چاہیئے کہ وہ امن و محبت کا پیغام عام کریں، تاکہ امن کی فضاء قائم ہو اور پر امن معاشرے کے قیام کی بات آگے بڑھ سکے۔
 

تبصرہ بھیجیں
نام:
ایمیل:
* ‫نظریہ‬:
‫برای‬ مہربانی اپنے تبصرے میں اردو میں لکھیں.
‫‫قوانین‬ ‫ملک‬ ‫و‬ ‫مذھب‬ ‫کے‬ ‫خالف‬ ‫اور‬ ‫قوم‬ ‫و‬ ‫اشخاص‬ ‫کی‬ ‫توہین‬ ‫پر‬ ‫مشتمل‬ ‫تبصرے‬ ‫نشر‬ ‫نہیں‬ ‫ہوں‬ ‫گے‬